تازہ ترین خبریںدلی این سی آر

ہریانہ: بی جے پی کو 9 ممبران اسمبلی کی حمایت، کل پیش کرے گی دعوی

ہریانہ میں بی جے پی کو حکومت بنانے کے لئے نو دیگر ممبران اسمبلی کی حمایت مل گئی ہے اور سنیچر کو پارٹی کے نو منتخب ممبران اسمبلی کی پہلی میٹنگ کے بعد گورنر سے ملکر حکومت سازی کا دعوی پیش کرے گی۔ یاد رہے کہ بی جے پی ہریانہ میں 40 نشستیں جیت کر سب سے بڑی پارٹی بن کر ابھری ہے لیکن حکومت بنانے کے لئے اسے اکثریت کے لئے مزید چھ سیٹیں درکار ہیں۔

بی جے پی کے جنرل سکریٹری اور ہریانہ کے انچارج انل جین نے یہاں نامہ نگاروں کو بتایاکہ کل گیارہ بجے چنڈی گڑھ میں بی جے پی کے نو منتخب ممبران اسمبلی کی میٹنگ ہوئی۔ میٹنگ میں لیجس لیچر پارٹی کے رہنما کا انتخاب ہوگا اور اس کے بعد ہم گورنر سے مل کر حکومت سازی کا دعوی پیش کریں گے۔ انہوں نے مزید بتایاکہ لیجس لیچر پارٹی کی میٹنگ میں جنرل سکریٹری ارون سنگھ اور مرکزی وزیر خزانہ نرملا سیتا رمن مرکزی مشاہد کے طور پر حصہ لیں گے۔

ذرائع کے مطابق منوہر لال کھٹر کے ہی لیڈر منتخب کئے جانے کا امکان ہے۔ بی جے پی کو اب تک نو دیگر ممبران اسمبلی کی حمایت کا خط مل چکا ہے۔ جن میں سات آزاد ممبران اسمبلی کے علاوہ ہریانہ لوک ہت پارتی کے گوپال کانڈا اور انڈین نیشنل لوک دل کے ابھئے چوٹالہ شامل ہیں۔ دریں اثنا بی جے پی کی قومی نائب صدر اوما بھارتی نے عصمت دری اور قتل کے ملزم گوپال کانڈا کی حمایت لئے جانے پر سخت اعتراض کرکے سیاسی ہلچل مچا دی ہے۔ انہوں نے پارٹی کو وارننگ دی کہ وہ اقتدار کے لئے اپنی اخلاقی بنیاد کو نہ بھولے اور بے داغ لوگوں کے ساتھ مل کر حکومت بنائے۔

بتا دیں کہ یہ وہی گوپال کانڈا ہیں جو عصمت دری سمیت کئی الزامات میں جیل میں بند تھے۔ اتنا ہی نہیں بلکہ بی جے پی سڑک سے لے کر پارلیمنٹ تک ان کی مخالفت کر چکی ہے۔ یاد رہے کہ کانڈا پر ائیر ہوسٹیس گیتیکا شرما کا جنسی استحصال کرنے کا الزام ہے اور یہ الزام خود گیتیکا شرما نے اپنے خودکشی نوٹ میں لکھ کر لگایا تھا۔ بعد میں اس ائیر ہوسٹیس نے تو خودکشی کی ہی تھی، اس کی ماں نے بھی خود کشی کر لی تھی۔ گیتیکا کی ماں نے بھی خودکشی نوٹ میں کانڈا پر کئی طرح کے الزامات عائد کیے تھے۔

اس سے پہلے ہریانہ کے رخصت پزیر وزیراعلی مسٹر کھٹر نے ریاست میں دوبارہ حکومت بنانے کا دعوی کرنے سے پہلے آج پارٹی کے کارگذار صدر جگت پرکاش نڈا سے ان کی رہائش گاہ پر ملاقات کی۔ انہوں نے کل دیر رات پارٹی صدر امت شاہ اور دیگر رہنماوں کے ساتھ ملاقات کرکے ہریانہ میں حکومت سازی کے سلسلے میں تبادلہ خیال کیا تھا۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close