اپنا دیشتازہ ترین خبریں

کسان آندولن: کنگنا راناوت کے ٹویٹ پر ہنگامہ، گرودوارہ کمیٹی نے بھیجا قانونی نوٹس

نئی دہلی، (یواین آئی)
دہلی سکھ گرودوارہ مینیجمنٹ کمیٹی (ڈی ایس جی ایم سی) نے کسان تحریک اور پنجابی برادری کی بزرگ خواتین کے خلاف غلط زبان کا استعمال کرنے کے معاملے میں بالی وڈ اداکارہ کنگنا راناوت کو قانونی نوٹس بھیجا ہے۔

ڈی ایس جی ایم سی نے کنگنا سے فوراً عوامی طور پر معافی مانگنے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔ قابل ذکر ہے کہ کنگنا نے ایک ٹویٹ کے ذریعے کسان تحریک اور بزرگ خواتین کے خلاف غلط زبان کا استعمال کیا تھا۔ ڈی ایس جی ایم سی کے صدر منجندر سنگھ سرسا نے اپنے وکیل راج کمل کے ذریعے سے کنگنا کو نوٹس بھیج کر کہا، ’کنگنا نے جان بوجھ کر کسانوں، مظاہرین اور کارکنان کو بدنام کرنے کے لیے ٹویٹ، ری ٹیوٹ کیے جبکہ کسان تحریک کے تحت کسان دہلی میں پرامن احتجاجی مظاہرہ کر رہے ہیں۔ کنگنا نے اپنے ایک ٹویٹ میں ایک فوٹو بھی شیئر کیا تھا جس میں دو بزرگ خواتین تھیں۔ ٹویٹ کی زبان بےحد قابل اعتراض اور غیر مہذب تھی‘۔

اس ٹویٹ میں کنگنا نے لکھا تھا کہ دادی، بزرگ خاتون کو 100 روپیے کی دہاڑی ملتی ہے اور یہ بھی کہا تھا کہ یہ اشتعال انگیز اور اسپونسرڈ مہم ہے۔ ہمارا مطالبہ ہے کہ کنگنا ایک ہفتے میں کسانوں اور بزرگ خواتین سے مشروط معافی مانگے اور وضاحت نامہ دے کر اپنا ٹویٹ، ری ٹویٹ واپس لے۔ اگر کنگنا ایک ہفتے میں معافی نہیں مانگتی ہے تو دہلی گرودوارہ کمیٹی کے بغیر کسی دوسری نوٹس کے کنگنا کو قانون کے مطابق سزا دلانے کی کوشش کرے گی۔

نیوز ایجنسی (یو این آئی ان پٹ کے ساتھ)

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close