Khabar Mantra
بہار- جھارکھنڈتازہ ترین خبریں

نتیش سرکار میں ہلچل، 17 جے ڈی یو اراکین اسمبلی آر جے ڈی کے رابطے میں!

پٹنہ، (پی این این)
بہار اسمبلی انتخابات میں معمولی کامیابی کے بعد نتیش کمار ایک بار پھر وزیر اعلی بن گئے ہیں، لیکن وہاں کی سیاست میں سب کچھ ٹھیک نہیں چل رہا ہے۔ یہاں حزب اختلاف حکمران مسلسل این ڈی اے کی پریشانی بڑھانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ گزشتہ دنوں اروناچل پردیش میں نتیش کمار کی پارٹی (جے ڈی یو) کے ایم ایل اے بی جے پی میں شامل ہوئے جس کے بعد بہار کی سیاست میں بھی ہلچل مچ گئی ہے۔ اس درمیان آر جے ڈی لیڈر شیام رجک کا ایک بیان سامنے آیا ہے جس نے ظاہر کر دیا ہے کہ ریاست میں موجودہ این ڈی اے حکومت زیادہ دن نہیں چلنے والی۔

بتا دیں کہ جے ڈی یو سے ناطہ توڑ کر آرجے ڈی میں شامل ہوئے سابق وزیر شیام رجک نے دعویٰ کیاکہ جے ڈی یو کے 17 اراکین اسمبلی آرجے ڈی کے رابطے میں ہیں اور کبھی بھی ان کی پارٹی میں شامل ہوسکتے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ ”پارٹی تبدیلی قانون کی خلاف ورزی نہیں کرنا چاہتے ہیں اس لئے ان اراکین اسمبلی کو کہا گیا ہے کہ اگر وہ 28 کی تعداد میں آتے ہیں تو ان کا خیر مقدم ہے اور جلد ہی ان کی تعداد 28 ہوجائے گی۔ انہوں کہا کہ ہم اس بات کا انتظار کر رہے ہیں کہ جے ڈی یو کے مزید کچھ اراکین اسمبلی پارٹی چھوڑنے کا ذہن بنائیں اور پھر سبھی کو ایک ساتھ آر جے ڈی میں شامل کیا جائے گا۔

دوسری طرف سی ایم نتیش کمار نے دعوے کو بے بنیاد بتاتے ہوئے کہاکہ ”کوئی بھی کسی طرح کا دعویٰ کر رہا ہے وہ سب بے بنیاد ہے، اس میں کوئی صداقت نہیں ہے“۔ جے ڈی یو کے ترجمان راجیو رنجن نے بھی شیام راجک کے ان دعوؤں پر کہاکہ وہ گمراہ کن بیانات دے کر لوگوں کو گمراہ کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ پارٹی مکمل طور پر متحد ہے اور بی جے پی کے ساتھ مل کر اپنی 5 سال حکومت کی معیاد مکمل کرے گی۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close