تازہ ترین خبریںدلی نامہ

شہریت قانون: لال قلعہ کے آس پاس دفعہ 144 نافذ، کئی علاقوں میں موبائل سروس پر روک

شہریت قانون کے خلاف دہلی کے کئی علاقوں میں احتجاج و مظاہرہ کو دیکھتے ہوئے اور لوگوں کو جنتر منتر اور لال قلعہ جانے سے روکنے کے بہت سے میٹرو اسٹیشن بند کئے گئے ہیں۔ جامعہ نگر علاقے کے جامعہ ملیہ اسلامیہ میٹرو اسٹیشن کے علاوہ اوکھلا وہار، جسولہ وہار میٹرو اسٹیشن کو بند کیا گیا ہے. منیركا میٹرو اسٹیشن بھی بند ہے۔

احتجاج کو دیکھتے ہوئے لال قلعہ کے ارد گرد حکم امتناعی نافذ ہے کیونکہ مظاہرین نے لال قلعہ سے شہید پارک تک مارچ نکالنے اعلان کیا تھا۔ لوگوں کے احتجاج و مظاہرہ کے خدشہ کو دیکھتے ہوئے لال قلعہ، جامع مسجد، چاندنی چوک، یونیورسٹی، پٹیل چوک، لوک کلیان مارگ، ادیوگ بھون، آئی ٹی او، پرگتی میدان، سینٹرل سکریٹریٹ اور خان مارکیٹ میٹرو اسٹیشن بند کر دیئے گئے ہیں۔ سکریٹریٹ کے سبھی انٹری اور ایگزٹ گیٹ بند کئے گئے ہیں لیکن یہاں سے ٹرینوں کو تبدیل کرنے کی سہولت ہے۔

خبروں کے مطابق لال قلع میں جو طلباء مظاہرہ میں حصہ لینے کے لئے گئے ہیں ان میں سے بھی کئی کو پولس نے حراست میں لے لیا ہے۔ واضح رہے کہ یہاں پر دفعہ 144 لاگو ہے اس لئے یہاں پر چار سے زیادہ لوگ جمع نہیں ہو سکتے اس کے علاوہ دہلی میں اب تک ایئرٹیل، ووڈا فون-آئیڈیا، ریلائنس جیو نے موبائل انٹرنیٹ، کالنگ، ایس ایم ایس کی سہولت بند کرنے کا اعلان کیا ہے، منڈی ہاؤس، سیلم پور، جعفرآباد، مصطفیٰ باد، جامعہ نگر، شاہین باغ اور بوانہ میں یہ سہولیات بند کر دی گئی ہیں۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close