اپنا دیشتازہ ترین خبریں

بنگال: ٹی ایم سی کو بڑا جھٹکا، ریاستی وزیر شوبھندو ادھیکاری مستعفی

کلکتہ، (یو این آئی)
ترنمول کانگریس کے ذریعہ منانے کی تمام تر کوششوں کے باوجود ریاستی وزیر شوبھندو ادھیکاری نے آج وزارت سے استعفیٰ دیدیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی ان کے بی جے پی میں شامل ہونے کی قیاس آرائی میں مزید تقویت آگئی ہے۔

اس سے قبل آج صبح ہی انہوں نے سرکاری سیکورٹی چھوڑ دی تھی۔ انہیں زیڈ زمرے کی سیکورٹی ملتی ہے۔ انہوں نے پائلٹ کار اور دیگر سرکاری سہولیات واپس کر دیا۔شوبھندو ادھیکاری نے وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی کو خط لکھ کر اپنے استعفیٰ سے آگاہ کیا۔ انہوں نے استعفیٰ میں وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی کا شکریہ ادا کرتے ہوئے لکھا ہے کہ ’آپ نے ریاست کے عوام کا شکریہ ادا کرنے کا موقع دیا۔ خیال رہے کہ شوبھندوادھیکاری نے وزارت کا عہدہ چھوڑنے کے باوجود ممبراسمبلی کے عہدے سے استعفیٰ نہیں دیا ہے۔ ان کے استعفیٰ کو گورنر نے قبول کرلیا ہے۔ کل انہوں نے ایچ آر بی سی کے چیئرمین کے عہدہ سے استعفیٰ دیدیا تھا۔ دو دن قبل ان کے قریبی سراج خان نے بی جے پی میں شمولیت اختیار کرلی تھی۔

شوبھندو ادھیکاری گزشتہ کئی مہینوں سے وزارت کے کام کاج سے دوری اختیار کرلی تھی، پارٹی کی میٹنگوں میں شرکت کرنے سے گریز کر رہے تھے اور اپنے طور پر پروگرام منعقد کر رہے تھے۔ جب کہ ترنمول کانگریس کے سینئر ممبر پارلیمنٹ سوگاتارائے نے انہیں منانے کے لئے دو مرتبہ ملاقات کی تھی اور ترنمول کانگریس کے حکمت عملی کار پرشانت کشور نے بھی ان سے ملاقات کی کوشش کی تھی۔ ان کے والداور ممبر پارلیمنٹ ششیر ادھیکاری سے ملاقات کی۔ اس کے باوجود شوبھندو ادھیکاری کو منانے میں ترنمول کانگریس ناکام رہی ہے۔

اطلاعات کے مطابق شوبھندو ادھیکاری کل سنیچر کو دہلی جا رہے ہیں۔ تاہم یہ واضح نہیں ہے وہ دہلی میں کن لیڈروں سے ملاقات کریں گے۔ بی جے پی کے ریاستی صدر دلیپ گھوش نے واضح کیا ہے کہ ان کے بی جے پی میں شامل ہونے کی کوئی خبر نہیں ہے۔ تاہم، دلیپ گھوش نے کہا کہ اگر وہ بی جے پی میں آتے ہیں تو ان کا خیرمقدم کیا جائے گا۔

نیوز ایجنسی (یو این آئی ان پٹ کے ساتھ)

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close