اپنا دیشتازہ ترین خبریں

آدھار فیصلے نے عام آدمی کے پرائیویسی کے حق کو برقرار رکھا: سرجے والا

کانگریس کے سینیئر رہنما رندیپ سنگھ سرجے والا نے آدھار کارڈ سے متعلق سپریم کورٹ کے فیصلے کا خیرمقدم کیا ہے ۔ انہوں نے ٹوئیٹ کیا ہے کہ آدھار فیصلے نے عام آدمی کے پرائیویسی کے حق کو برقرار رکھا ۔ انہوں نے کہا کہ عدالت نے مودی حکومت کے آدھار قانون کے ڈراؤنے سیکشن 57 کو ختم کردیا جس کے ساتھ ہی بینک اکاؤنٹ ، موبائل، اسکول ، ایئر لائن، ٹریول ایجنٹ اور دوسرے پرائیویٹ ادارے اب آدھار طلب نہیں کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ اب وقت آگیا ہے کہ شہریوں کے جو ڈاٹا اب تک جمع کئے گئے ہیں انہیں ضائع کیا جائے۔

واضح رہے کہ سپریم کورٹ نے آج اپنے ایک فیصلے میں آدھار کارڈ کی آئینی فعالیت کو محدودکر دیا۔ چیف جسٹس دیپک مشرا،جسٹس اے کے سکری،جسٹس اے ایم کھانولکر ،جسٹس ڈی وائی چندر چوڑ اور جسٹس اشوک بھوشن کی آئینی بینچ نے اکثریت سے اس فیصلے میں آدھار قانون کو فعال رکھتےہوئے اس کے لا محدود اطلاق ختم کر دئے ۔

جسٹس سکریٹری نے خود اپنی ،چیف جسٹس اور جسٹس کھانولکر کی جانب سے اکثریت سےفیصلہ سناتے ہوئے بینک کھاتے کھلوانے،موبائل کنکشن حاصل کرنے اور اسکولوں میں داخلے کےلئے آدھار کارڈ کو لازمی نہیں رکھا۔ البتہ پین کارڈ کے لئے اب بھی یہ لازمی رہے گا۔سپریم کورٹ نے واضح کیا کہ پروائیویٹ کمپنیاں آدھار ڈاٹا طلب نہیں کرسکتیں۔ عدالت نےحکومت کو یہ ہدایت بھی دی ہے کہ وہ ڈاٹا کی سکیورٹی کے سلسلے میں ایک مضبوط نظام تیار کرے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close