بہار- جھارکھنڈتازہ ترین خبریں

نتیش کمار کے سامنے بے روزگاری سب سے بڑا چیلنج

پٹنہ، (پی این این )
بہار کا انتخابی ماحول گرمایا ہوا ہے اور مختلف سیاسی پارٹیاں اپنے اپنے سطح پر انتخابی وعدے کر رہی ہیں۔ سیاسی پارٹیوں کی حکمت عملی فی الحال ذات، پات کے تناسب کے ارد گرد گھوم رہی ہے۔ جس سے اصل ایشوز کہیں پیچھے چھوٹ گئے ہیں۔ ایک نیوز چینل کے پروگرام میں بہار کے ایک نوجوان نے روزگار کے ایشو پر نتیش سرکار کو گھیرا ہے اور کئی سنگین سوال اٹھائے۔

نوجوان کا الزام ہے کہ نتیش سرکار کے پاس کوئی ویزن نہیں ہے، وہ لوگوں کو نوکریاں کہاں سے دیں گے۔ پروگرام کے دوران اینکر نے نوجوان سے بات کی۔ اس نوجوان نے نتیش سرکار کی نکتہ چینی کرتے ہوئے کہا کہ نتیش سرکار کا ایشو اب کیسے بدل گیا۔ 6 ماہ قبل جب کورونا کی بڑی تعداد میں مبتلا ہوکر مزدور واپس بہار لوٹے تو ان کا ایشو تھا کہ ہمیں اب باہر نہیں جانا ہے اور ہمیں یہی روزگار چاہئے تو آپ کا یہ قانون کیسے بدل گیا۔ اب ذات پات کی بنیاد پر وہ ووٹ کیوں مانگ رہے ہیں۔

نوجوان نے کہا کہ کہ ایشو روزگار کا ہونا چاہئے جو ترقی کا ویزن دے سکے۔ اس نے کہا کہ آپ کہتے ہیں کہ 10لاکھ نوکری دیں گے لیکن آپ کے پاس کوئی ویزن نہیں ہیں تو کہاں سے نوکری دیں گے۔ نوجوان نے کہا کہ بہار میں 38 ہزار کالج کھول دیئے گئے ہیں لیکن ان میں 8 ہزار بچے بھی ایڈمشن نہیں لے پاتے، کئی کالجوں میں صرف 8 سے 10 بچے ہیں۔ سرکار ان بچوں کو کیسے روزگار دے گی۔ اس نے کہا کہ جب کوئی ویزن نہیں ہوگا تو میں کسی پارٹی کو ووٹ نہیں دوں گا۔

واضح رہے کہ نتیش 15 سال سے اقتدار میں ہیں اور انہوں نے روزگار کو پہلے ایشو بنایا تھا اب یہی بے روزگاری نتیش کے خلاف سب سے بڑا ایشو بن کر سامنے آ رہی ہے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close