اپنا دیشتازہ ترین خبریں

دہلی تشدد معاملہ: پولیس کارروائی پر اپوزیشن کا میمورنڈم

نئی دہلی، (یو این آئی)
دہلی میں ہونے والے تشدد میں پولیس کی تحقیقات کے سلسلے میں اٹھنے والے سوالوں اور متاثرین کے خلاف یکطرفہ کارروائی کے معاملے میں جمعرات کے روز، کانگریس سمیت حزب اختلاف کی جماعتوں کے رہنماؤں نے صدر رام ناتھ کووند سے ملاقات کرکے ایک میمورنڈم سپرد کیا۔

کانگریس کے رہنما احمد پٹیل، سی پی آئی کے رہنما ڈی راجہ، سی پی آئی (ایم) کے جنرل سکریٹری ستارام یچوری، ڈی ایم کے کے کنی موزی اور راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی) کے راجیہ سبھا کے رکن پارلیمنٹ منوج جھا نے صدر سے ملاقات کی اور دہلی تشدد معاملے میں صدر کو ایک یادداشت پیش کیا۔ انہوں نے کہاکہ پولیس رپورٹ میں مرکزی وزارت داخلہ کے اشارے پر شہریت ترمیمی ایکٹ، قومی شہریت رجسٹر اور قومی آبادی رجسٹر کے خلاف پرامن مظاہرین کو نشانہ بنایا جا رہا ہے، جبکہ حکمراں جماعت کے رہنماؤں کی اشتعال انگیز تقریر کے خلاف کوئی کارروائی نہیں کی گئی۔ حکمران جماعت کے سینئر رہنماؤں کے علاوہ، کابینہ کے وزیر نے اشتعال انگیز تقریریں کی ہیں۔

حزب اختلاف کے رہنماؤں نے مسٹر کووند کو سونپے گئے میورنڈم میں یہ بھی کہاکہ دہلی تشدد کی تحقیقات میں متعدد بے گناہ انسانی حقوق کے کارکنوں، مشہور علماء اور سیاسی رہنماؤں کو پولیس نے نشانہ بنایا۔ فرقہ وارانہ تشدد میں ملوث سازشیوں کو بچانے کے لئے تحقیقات کے نام پر سازش کی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ صرف تشدد کا نشانہ بننے والے افراد کو ہی گرفتار کیا جارہا ہے جبکہ مجرم آزاد گھوم رہے ہیں۔

واضح رہے کہ بدھ کے روز دہلی پولیس نے دہلی پر تشدد کے سلسلے میں 17500صفحات کی چارج شیٹ داخل کی۔ پولیس نے چارج شیٹ میں دعوی کیا ہے کہ ان کے پاس الزامات کو ثابت کرنے کے لئے کافی ثبوت موجود ہیں۔

نیوز ایجنسی (یو این آئی ان پٹ کے ساتھ)

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close