اپنا دیشتازہ ترین خبریں

ہندوستان کی شرح ترقی 6 فیصد رہنے کا امکان: عالمی بینک

عالمی بینک نے اپنے تازہ اندازے میں کہا ہے کہ بھارت کی شرح ترقی اس سال 6 فیصد رہے گی۔ گزشتہ سال 2018 – 19 میں ترقی کی شرح 6.9 رہی تھی۔ اگرچہ اقتصادی کمی کے ساتھ ہی عالمی بینک نے امید ظاہر کی ہے کہ 2021 تک بھارت کی ترقی کی شرح پھر بڑھ کر 6.9 فیصد تک پہنچ سکتی ہے۔

ساؤتھ ایشیا اکنامک فوکس کے تازہ ورژن میں عالمی بینک نے کہا ہے کہ مسلسل دوسرے سال بھارت کی اقتصادی ترقی کی شرح میں کمی دیکھنے کو ملی ہے۔ 2017 – 18 میں ترقی کی شرح 7.2 فیصد تھی۔ اندازہ لگایا گیا ہے کہ 2022 تک بھارت کی ترقی کی شرح 7.2 کے اعداد و شمار کو چھو سکتی ہے۔ عالمی بینک کا کہنا ہے کہ پیداوار اور تعمیری سرگرمیاں بڑھنے سے صنعتی مصنوعات کی شرح ترقی بڑھ کر 6.9 فیصد ہو گئی ہے۔ وہیں زراعت اور خدمات کے شعبے میں ترقی 2.9 فیصد اور 7.5 فیصد تک رہی ہے۔

بین الاقوامی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) 15 اکتوبر کو اس اور اگلے سال کے لئے اضافی تخمینہ کے سرکاری ترمیم شدہ اعداد و شمار جاری کرے گا۔ مانا جا رہا ہے کہ ان اعداد و شمار سے حکومت کے ملک کو 50 ٹریلین کی معیشت بنانے کے مقصد کو جھٹکا لگ سکتا ہے۔ ملک میں کئی سیکٹروں میں پیداوار تقریباً ٹھپ ہو گئی ہے۔ ایسا اس وجہ سے لوگ پرانے اسٹاک نہیں خرید رہے ہیں۔ ایسے میں یہ دیکھنا ہوگا کہ حکومت آگے کون سی حکمت عملی اپناتی ہے۔

اس کے علاوہ عالمی بینک کی رپورٹ کے مطابق 2019 میں بھارت کی ترقی کی شرح کے مقابلے میں بنگلہ دیش اور نیپال کے تیزی سے بڑھنے کے اندازے ہیں۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close