اپنا دیشتازہ ترین خبریں

ہندوستان اقلیتوں کیلئے جنت اور پاکستان جہنم بنا ہوا ہے

پی ایچ ڈی چیمبر آف کامرس اور انڈسٹری کے سالانہ کانفرنس میں مرکزی اقلیتی وزیر مختار عباس نقوی کا خطاب

نئی دہلی(انور حسین جعفری)
مرکزی اقلیتی وزیر مختار عباس نقوی نے آ ج کہاکہ دہشت گردی نہ مصرف ملک اور دنیا کے لئے خطرہ ہے بلکہ یہ اسلام کیلئے بھی خطرہ ہے۔ کچھ لوگ دہشت گردی پر اسلام کاتحفظی کوچ چڑھاتے ہیں جبکہ در حقیقت یہ اسلام کیلئے بھی خطرہ ہے۔ 5برسوں میں دہشت گرد ملک بھر میں کوئی بھی اپنی شیطا نی حرکت نہیں کرسکے، یہ لوگ پہلے دفعہ 370کو تحفظی کوچ بنا کر دہشت گردی کی شیطا نی حرکتیں کیا کرتے تھے، لیکن آج کشمیر میں چین ہے اور علیحدگی پسند بے چین ہیں۔ پہلے کشمیر میں الگ قانون تھا لیکن اب ایک قانون ہے۔ یہ وزیر اعظم نریندر مودی اور امت شاہ کی جوڑی نے ناممکن کو ممکن کر دکھایا۔کشمیر میں اتنے دن ہو گئے نہ کوئی قتل ہوا اور نہ ہوی کوئی پتھر بازی ہوئی ہے، جو لوگ یہ کہتے ہیں کہ علیحدگی پسندوں کو قید کر لیا گیا ہے،تو ان سے کہنا چا ہتے ہیں کہ کو ن سا ملک ہے جو اپنے ملک میں دہشت گردی اور الگاؤ وادوں کو برداشت کر سکتا ہے؟ جو لوگ اس پر اعتراض کر رہے ہیں وہ غلط کر رہے ہیں۔

مرکزی اقلیتی وزیر مختار عباس نقوی آ ج یہاں ’ٹو ورڈس این انکلواینڈ پروس پیروس نیو انڈیا‘ کے موضو ع پر پی ایچ ڈی چیمبر آف کامرس اور انڈسٹری کے 14ویں سالانہ کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔ مرکزی اقلیتی وزیرمختار عباس نقوی نے کہا کہوزیر اعظم نریندر مودی کے قیادت میں زمین سے جڑی اور ضمیر پر کھڑی حکومت کی یکساں سب کو چھوتی ہوئی ترقی (انکلوزو گروتھ)ہی راشٹر نیتی ہے۔انہوں نے کہاکہ مودی حکومت کی جانب سے اٹھائے گئے تاریخی اور بڑے اقتصادی اصلاحات کے وجہ آج بھارت دنیا کاپر کشش اور محفوظ سرمایہ کاری اور مینوفیکچرنگ کا ہب بن گیا ہے۔ ملک کی سیکورٹی، معیشت اور خوشحالی اور ترقی اب مضبوط اور محفوظ ہاتھوں میں ہے۔ ملک کی معیشت کی بنیاد زمین کی ضرورت اور ضمیر کی طاقت سے تیار کی گئی ہے۔ تمام عالمی چیلنجوں کے باوجود ملک میں مہنگائی کی شرح بڑھنے نہیں دی گئی۔کسی بھی چیز کی قلت اور تنگی نہیں ہونے دی گئی ہے۔مختار عباس نقوی نے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی کی قیادت میں کئے گئے مختلف تاریخی سدھار اور ایماندار انتظام نے ملک کو ایک محفوظ سرمایہ کاری کا مرکز بنایا ہے۔ کارپوریٹ ٹیکس میں کٹوتی، ملکی معیشت کو اگلے پانچ سال میں پانچ ٹریلین ڈالر معیشت بنانے کے ہدف کو حاصل کرنے میں اہم قدم ہے۔ چھوٹے، درمیانے درجے کے اور بڑی صنعتوں کو یکساں موقع اور سہولت دی جا رہی ہے۔

مسٹر نقوی نے کہا کہ کارپوریٹ ٹیکس جو پہلے 30 فیصد تھا اس کم کرکے 22 فیصد کر دیا گیا ہے، اس انقلابی فیصلے سے میک ان انڈیا اور اسٹارٹ اپ کو بھی قوت ملے گا۔ یہ تاریخی اقتصادی سدھار ہے، اس سے سرمایہ کاری میں اضافہ ہو گا، روزگار کے مواقع میں بھی تیزی آئے گی۔مسٹر نقوی نے کہا کہ اقتصادی بہتر کی سمت میں جی ایس ٹی، نوٹ بندی،بینکنگ سدھار، ٹیکس اصلاحات جیسے مضبوط تاریخی فیصلہ لئے گئے ہیں۔ انفراسٹرکچر پر خرچ مودی حکومت کی ترجیح رہی ہے۔ آنے والے 5 سال میں انفراسٹرکچر ترقی پر 100 ملین کروڑ روپے خرچ کئے جائیں گے۔

مرکزی اقیتی وزیر مختار عباس نقوی نے کہاکہ مودی حکومت نے مختلف علاقوں میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری (ایف ڈی آئی) کی جائزہ کے پیشکش کو منظوری دے دی ہے۔ ایف ڈی آئی پالیسی میں تبدیلی کے نتیجے میں ہندوستان زیادہ پر کشش براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری کا مرکز بن سکے گا۔مرکزی اقلیتی وزیر مختار عباس نقوی نے کہاکہ مودی حکومت نے بنا رکے اور بنا تھکے ملک کے تمام لوگوں کے وقار اور ترقی کیلئے کام کیا ہے، جس نے بھی ملک اورعوام کے وقار کو چوت پہنچا نے کی کوشش کی ہے اس کو منہ توڑ جواب دیا ہے، آج ملک میں مثبت ماحول ہے۔

وزیر اعظم نے ملک میں ایک قانون کیا اب وہ چا ہتے ہیں کہ ایک ملک اور ایک الیکشن ہو۔ انہوں نے کہاکہ اکلوزو گروتھ کو دیکھیں تو ملک میں کمزور طبقہ بہت تیزی سے آ گے بڑھا ہے۔ پاکستان میں اقلیتوں پر ظلم ہو تا ہے جبکہ ہندوستان میں ہر شعبہ میں اقلیت نے ترقی کی ہے۔ وزیر موصوف نے کہاکہ ہندوستان اقلیتوں کیلئے جنت اور پاکستان جہنم بنا ہوا ہے، ہم سماج کے کاندھے سے کاندھا ملا کر چلنے میں یقین رکھتے ہیں۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close