تازہ ترین خبریںکھیل کھلاڑی

گلابی گیند ٹیسٹ کو یادگار بنانے کی زبردست تیاریاں، شائقین کو 22 نومبر کا انتظار

ہندوستانی کرکٹ ٹیم کی تاریخ میں پہلی بار کھیلے جانے والے ڈے ۔نائٹ ٹیسٹ کو یادگار بنانے کیلئے کولکتہ کے ایڈن گارڈن میدان پر زبردست تیاریاں کی جا رہی ہیں۔

ہندوستان اور بنگلہ دیش کے درمیان 22 نومبر سے شروع ہونے والا سیریز کا دوسرا میچ گلابی گیند سے ڈے نائٹ فارمیٹ میں کھیلا جائے گا۔ یہ دونوں ممالک کیلئے پہلا موقع ہے جب وہ گلابی گیند سے ٹیسٹ میچ کھیلیں گے۔ یہ ہندوستان کا 540 واں ٹیسٹ میچ ہوگا۔ دونوں ممالک کے درمیان پہلا میچ اندور کے هولكر اسٹیڈیم میں تین دن میں ہی ختم ہو گیا تھا۔

بنگال کرکٹ ایسوسی ایشن (کیب) اور ہندوستانی کرکٹ کنٹرول بورڈ (بی سی سی آئی) مل کر اس میچ کی تیاریوں میں مصروف ہیں جس میں کئی سابق عظیم کھلاڑیوں سچن تندولکر، وی وی ایس لکشمن، راہل ڈراوڈ، انل کمبلے کے ساتھ ساتھ بنگلہ دیش کی وزیر اعظم شیخ حسینہ اور مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کے موجود رہنے کی بھی امید ہے۔ وہیں مغربی بنگال کی وزیر اعلی ممتا بنرجی کو بھی مدعو کیا گیا ہے۔

بی سی سی آئی کے موجودہ صدر اور کیب کے سابق سربراہ سوربھ گانگولی کی پہل کے بعد ہندوستان پہلی بار ڈے نائٹ فارمیٹ میں کھیلنے کے لئے راضی ہوا ہے۔ ہندوستان اپنے گھریلو میدان پر ٹیسٹ کے اس نئے فارمیٹ میں کھیلنے جا رہا ہے جس کے لئے کئی قسم کے پروگراموں کا اس دوران انعقاد کیا گیا ہے۔

کیب نے میچ میں کرے کرافٹ کے ساتھ مل کر ایڈن گارڈں کی دیواروں پر کرکٹ کے یادگار لمحات کو تصاویر کے طور پر پیش کرنے کی بھی کوشش کی ہے۔ یہاں کھلاڑیوں کے پہلے میچ سے لے کر ان کے قومی ٹیم میں کھیلنے تک کے سفر کو دکھایا جائے گا۔کرے کرافٹ کے سربراہ سيان مکھرجی نے اس پوری پینٹنگ کو ڈیزائن کیا ہے۔ ہندوستان اور بنگلہ دیش دونوں ہی ٹیموں کے لیے یہ تاریخی لمحہ ہوگا اس لئے ان کے نام کا میسکاٹس بھی تیار کیا گیا ہے جسے ‘پنكو-ٹنکو’ کا نام دیا گیا ہے۔ یہ میسکاٹس میچ کے دوران دکھایا جائے گا۔

شہید مینار اور کے ایم سی پارکوں میں گلابی رنگ کی روشنی کی جائے گی جبکہ ٹاٹا اسٹیل عمارت پر 20 نومبر سےتھری ڈی میپنگ دیکھنے کو ملے گی۔ان سب کے علاوہ پورے شہرمیں درجنوں بل بورڈ لگائے گئے ہیں جو گلابی گیند سے ہونے والے میچ پر خصوصی معلومات مہیا کرائیں گے۔ دونوں ٹیمیں سینسپیرل گرین لینڈ (ایس جی) گلابی گیند سے میچ کھیلیں گی جو ٹیسٹ میں باقاعدہ استعمال ہونے والی كوكابورا گیندوں سے مختلف ہے۔

کیب کے سیکرٹری ابھیشیک ڈالمیا نے بتایا کہ فوج کے پیراٹروپر ایڈن گارڈں میں آسمان سے نیچے اتریں گے اور میچ سے پہلے دونوں کپتانوں کو گلابی گیند دیں گے۔ انہوں نے کہا، "فوج کی ایسٹرن کمانڈ کے پیراٹروپر وکٹ پر دو گلابی گیند کے ساتھ اتریں گے اور دونوں کپتانوں کو گیند سونپیں گے۔”

ڈالمیا نے بتایاکہ میچ ہر روز ایک بجے سے شروع ہو جائے گا جس میں تین بجکر 40 منٹ پر لنچ کے بعد میچ دوبارہ شروع ہو گا جس میں فلڈ لائٹیں آن کر دی جائیں گی۔ میچ کا آخری سیشن 6 سے 8 بجے تک چلے گا۔ اس میچ کے سلسلے میں لوگ کافی پرجوش ہیں اور ایڈن گارڈن میں قریب 50 ہزار شائقین کے پہلے تین دن موجود رہنے کی امید ہے جس کی ٹکٹیں پہلے ہی فروخت ہو چکی ہیں۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close