آئینۂ عالمتازہ ترین خبریں

کورونا وائرس: دنیا بھر 11،248 اموات، اٹلی نے چین کو پیچھے چھوڑا

کورونا سے حالات سنگین، ملک میں 294 معاملوں کی تصدیق، چار کی موت

دنیا کے 168 ممالک میں پھیل چکے کوروناوائرس -كووڈ 19 رکنے کا نام نہیں لے رہا ہے اور اب تک اس خطرناک وائرس سے 11،248 افراد کی موت ہو چکی ہے جبکہ تقریباً 269،482 افراداس متاثر ہوئے ہیں۔ ہندوستان میں بھی کورونا وائرس پھیلتا جا رہا ہے اور اب تک اس سے متاثرین کی تعداد بڑھ کر 294 ہوگئی ہے۔ پنجاب کے نواں شہر میں ایک شخص کی موت سے ملک میں کورونا وائرس سے کل چار افراد کی موت ہوچکی ہے۔ کرناٹک، دہلی اور مہاراشٹر میں ایک ایک شخص کی موت ہوئی تھی۔

وزارت صحت نے ہفتہ کو بتایا کہ ملک میں کورونا وائرس کے 294 کیسز کی تصدیق ہو چکی ہے۔ جن میں کورونا وائرس سے متاثر 23 افراد علاج کے بعد صحت مند ہوچکے ہیں۔ خیال رہے اب بھی اس وائرس سے سب سے زیادہ متاثر چین کے لوگ ہی ہیں تاہم راحت کی بات یہ ہے کہ ووہان میں گزشتہ تین دن سے کوئی معاملہ سامنے نہیں آیا ہے۔ اس وائرس کو لے کر تیار کی گئی ایک رپورٹ کے مطابق چین میں ہونے والی اموات کے 80 فیصد کیسز 60 سال سے زیادہ عمر کے لوگوں کے تھے۔ چین میں 81،008 افراد کے وائرس سے متاثر ہونے کی تصدیق ہوئی ہے اور تقریباً 3،255 افراد کی اس وائرس کے زد میں آنے کے بعد موت ہوئی ہے۔

عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران چین میں کورونا وائرس سے سات اور دنیا بھر میں 1008 افراد کی موت ہوئی ہے۔ چین میں اب تک 3255 لوگوں کی اس وائرس کی وجہ موت ہوئی ہے۔ کورونا وائرس سے اب تک مغربی بحرالکاہل خطہ میں 3405، یوروپی خطہ میں 4899، جنوب مشرقی ایشیائی خطہ میں 31، مغربی ایشیائی خطہ میں 1312، امریکہ کے نزدیک پڑنے والے علاقوں میں 178 اور افریقی علاقے میں آٹھ افراد کی موت ہوئی ہے۔ اس کے علاوہ یہ وائرس دنیا کے 180 سے زائد ممالک میں پھیل چکا ہے۔ چین کے علاوہ کورونا وائرس نے اٹلی، ایران، اسپین، امریکہ اور جنوبی کوریا سمیت دنیا کے کئی اور ممالک كو اپنی گرفت میں لے لیا ہے۔ اس وائرس کے نصف سے زائد کیس اب چین کے باہر کے ہیں۔

ڈبلیو ایچ او کی رپورٹ کے مطابق چین کے بعد اٹلی میں جان لیوا وائرس وسیع پیمانہ پر پھیل چکا ہے۔ اٹلی میں کورونا وائرس کی وجہ سے اب تک 4032 افراد ہلاک ہو چکے ہیں جبکہ 47،021 لوگ اس وائرس سےمتاثرہ ہیں۔ دنیا کے کچھ دوسرے ممالک میں بھی صورت حال انتہائی سنگین بتائے جا رہے ہیں۔ عرب ممالک اور ایران میں بھی کورونا وائرس کا قہر جاری ہے۔ ایران میں اس وائرس کی زد میں آکر ہلاک ہونے والوں کی تعداد بڑھ کر 1،433 ہوچکی ہے جبکہ 19،644 افراد اس وائرس سے متاثر ہوئے ہیں۔ اٹلی اور ایران کے ساتھ اسپین میں بھی کورونا وائرس نے اپنا قہر برپا کيا ہے۔ اسپین میں کورونا وائرس سے اب تک 1،002 افراد ہلاک ہوچکے ہیں جبکہ 19،980 لوگ اس سے متاثر ہوئے ہیں۔ جنوبی کوریا میں مرنے والوں کی تعداد 102 تک پہنچ چکی ہے جبکہ 8،799 لوگ اس سے متاثر ہوئے ہیں۔

چینی شہریوں کی اچھی خاصی تعداد والے ملک امریکہ میں بھی یہ بیماری بڑے پیمانے پر پھیل چکی ہے۔ امریکہ میں کورونا وائرس سے اب تک 249 افراد ہلاک ہوچکے ہیں جبکہ 19،285 لوگ اس سے متاثرہ ہوئے ہیں۔ امریکہ نے پہلے ہی کورونا وائرس وبا کی وجہ سے ملک میں قومی ایمرجنسی قرار دے دیا۔ اس سے امریکہ کی ریاستوں اور دیگر علاقوں میں کورونا وائرس وبا سے نمٹنے کے لئے وفاقی فنڈ سے حکومت کو 50 ارب ڈالر کی رقم ملے گی۔

فرانس بھی اس کی شدید لپیٹ میں ہے اور یہاں اب تک 450 لوگوں کی موت ہو چکی ہے جبکہ 12،612 افراد اس سے متاثر ہوئے ہیں۔ برطانیہ میں کورونا وائرس سے اب تک 178، ہالینڈ میں 106، جرمنی میں 48، فرانس میں 450، جنوبی کوریا میں 102، سوئٹزرلینڈ میں 43، آسٹریا میں چھ، بیلجئیم میں 37، ناروے میں سات، سویڈن میں 16، ڈنمارک میں چھ، کینیڈا میں 12، ملیشیا میں تین، پرتگال میں چھ، جاپان میں 33، برازیل میں11، آسٹریلیا میں سات، کروز شپ (ڈائمنڈ پرنسز) میں سات، آئرلینڈ میں تین، ترکی میں نو، پاکستان میں تین، لکسمبرگ میں پانچ، یونان میں چھ، ایکواڈورمیں سات، پولینڈ میں پانچ، سنگاپورمیں دو، انڈونیشیا میں 32، سلوواکیہ میں ایک، مصر میں سات، ہانکانگ میں چار، پیرو میں تین، فلپائن میں 18، عراق میں 13، لبنان میں 4، ارجنٹائنا میں تین، سان میرينو میں 14، متحدہ عرب امارات میں دو، تائیوان میں دو، بلغاریہ میں تین، کوسٹا ریکا میں دو، الجيريا میں 11، مراکش میں تین، ہنگری میں تین، ڈوممینیکن ریپبلک نئؓ دو، البانیہ میں دو، مالدووا اور آذربائیجان میں ایک ایک، یوکرین تین، برکینا فاسو، تیونس، مارٹنیک، بنگلہ دیش، پیراگوئے کیوبا، جمیکا، گوئٹے مالا، گیانا، جزائر ٹاپو، کیوراساؤ، برازايل تھائی لینڈ، آئس لینڈ، سلووینیا، بحرین، روس، میکسیکو، کروشیا، پنامہ، گیبون اور سوڈان میں ایک ایک کی موت ہوچکی ہے۔

پڑوسی ملک پاکستان میں بھی کورونا وائرس کا اثر زیادہ ہے۔ وہاں اب تک 461 لوگوں میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوچکی ہے جبکہ اس سے متاثرتین لوگوں کی موت ہو چکی ہے. بنگلہ دیش میں ابھی تک 20 افراد کے وائرس سے متاثر ہونے کی تصدیق کی گئی ہے جبکہ اس سے متاثرہ ایک شخص کی موت ہو چکی ہے۔ سری لنکا میں 70 لوگوں میں انفیکشن کی تصدیق ہوچکی ہے. نیپال میں اب تک صرف اس متاثرہ شخص کا پتہ چلا تھا جس کے ٹھیک ہونے کے بعد اس کی چھٹی بھی دے دی گئی تھی جبکہ افغانستان میں 24 مریضوں کا پتہ چلا ہے۔

جان لیوا کورونا وائرس کے پھیلنے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اقوام متحدہ نے اس وبا کی روک تھام کے لئے ایک کروڑ 50 لاکھ امریکی ڈالر کی مدد کی پیشکش کی ہے۔ اس فنڈ کا استعمال خاص طور پر کمزور صحت کی دیکھ بھال والے ممالک میں کیا جائے گا۔ ڈبلیو ایچ او نے كورونو وائرس کے خلاف جنگ کے لئے 67 کروڑ 50 لاکھ ڈالر جمع کرنے کا اعلان کیا ہے۔

قابل غور ہے کہ عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے کورونا وائرس کے بڑھتے خطرے کے درمیان اسے عالمی وبا قرار دیا ہے۔ پوری دنیا میں کورونا کے انفیکشن سے متاثر لوگوں میں سے اب تک سوا لاکھ سے زیادہ لوگوں کو اس سے نجات دلائی جا چکی ہے۔ فی الحال متاثرہ افراد کی کل تعداد سرکاری رپورٹوں سے کافی زیادہ ہونے کا امکان ہے۔ ایک سائنسدان نے امکان ظاہر کیا ہے کہ اس وائرس سے دنیا کی 60 فیصد آبادی متاثر ہوسکتی ہے۔ یاد رہے کہ دسمبرمیں چین کے صوبہ ہبوئی کے دارالحکومت ووہان سے کورونا وائرس انفیکشن کے کیس کی شروعات ہوئی تھی۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close