تازہ ترین خبریںدلی نامہ

کانگریس کو دھچکا: دہلی ہائی کورٹ نےکہا- دو ہفتے میں خالی کرنا ہوگا ہیرالڈہاؤس

کانگریس کو جمعرات کو اس وقت سخت دھچکا لگا، جب دہلی ہائی کورٹ نے مقامی ہیرالڈ ہاؤس کو دوہفتہ کے اندر خالی کرنے کا حکم دیا ہے۔

جسٹس سنیل گوڑ نے کانگریس کے اخبار نیشنل ہیرالڈ کے پبلشر ایسوسی ایٹیڈ جرنلس لمیٹڈ (اے جے ایل )کودوہفتے کے اندر ہیرالڈ ہاؤس کو خالی کرنے کو کہاہے۔ ہیرالڈ ہاؤس نئی دہلی کے بہادر شاہ ظفرمارگ کے پریس ایریا میں واقع ہے۔ واضح رہے کہ مرکزی شہری وزارت نے نے آئی ٹی او واقع ہیرالڈ ہاؤس کو 30اکتوبر کو خالی کرنے کا حکم دیا تھا، جس کے خلاف اے جے ایل نے دہلی ہائی کورٹ سے رجوع کیاتھا۔ لینڈ اینڈ ڈیولپمنٹ آفس نے ہیرالڈ کے 56سال پہلے کے پٹہ کو منسوخ کر دیا تھا۔

اس معاملہ کی سماعت کے دوران حکومت کی طرف سے پیش سالیسٹر جنرل تشار مہتہ نے دلیل دی تھی کہ اس عمارت سے 2008کے بعد سے کسی اخبارکی اشاعت نہیں ہورہی ہے۔ محترمہ مہتہ نے کہا کہ 2016میں جب عمارت کے معائنہ کرکے نوٹس جاری کیا گیا تھا تب نیشنل ہیرالڈ کی دوبارہ اشاعت شروع کی گئی تھی۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close