اپنا دیشتازہ ترین خبریں

کانگریس کو دشمنوں کی ضرورت نہیں: راشد علوی

کانگریس کے سینیئر رہنما راشد علوی نے پارٹی کے سابق صدر راہل گاندھی کے استعفیٰ کے سلسلے میں پارٹی کےسینیئر رہنما سلمان خورشید پر ان کے بیانوں کی شدید تنقید کرتے ہوئے ان پر بلاواسطہ طورپر حملہ کیا۔ انہوں نے کہاکہ کانگریس کو دشمنوں کی ضرورت نہیں ہے۔

مسٹر علوی نے مسٹر خورشید کا نام لیے بغیر بدھ کے روز کہا کہ جب دو ریاستوں میں الیکشن ہونے کو ہیں اور ووٹنگ کی تاریخ محض دس دن دور ہو تو یہ پارٹی کی جیت کے لیے کام کرنے کا وقت ہے اور اس وقت اس طرح کا تبصرہ کرنا ٹھیک نہیں ہے۔ پارٹی کے سینیئر رہنماؤں کو پارٹی کی قیادت کے سلسلے میں اگر کسی طرح کی شکایت ہے تو انھیں یہ بات پارٹی کے اندر کرنی چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ اس طرح کے بیان سے پارٹی کو نقصان ہوتا ہے اور اس صورتحال کو دیکھتے ہوئے لگتا ہے کہ کانگریس کو دشمنوں کی ضرورت نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ جب دیکھو پارٹی کا ہر دوسرا لیڈر الگ راگ الاپ رہا ہے۔ یہ حد درجہ بد قسمتی ہے۔ ’اس گھر کو آگ لگ گئی گھر کے چراغ سے‘ والی صورتحال ہوگئی ہے۔

مسٹر علوی نے یہ تبصرہ پارٹی کے سینیئر رہنما اور سابق مرکزی وزیر سلمان خورشید کے اس بیان پر کیا ہے جس میں انہوں نے کہا تھاکہ راہل گاندھی کا پارٹی کے عہدۂ صدارت سے استعفیٰ دینے کا وقت ٹھیک نہیں تھا۔ انھیں عہدہ نہ چھوڑنے کے لیے بے حد منایا گیا لیکن وہ اپنی ضد پر قائم رہے۔ مسٹر گاندھی صدارت چھوڑنے کے بجائے پارٹی کی شکست کے وجوہات پر غوروخوض کرتے تو کانگریس آج بہتر حالت میں ہوتی۔ ان کے عہدۂ صدارت سے ہٹنے کے بعد محترمہ سونیا گاندھی کو کانگریس کی ذمہ داری لینا پڑی اور یہ اچھافیصلہ تھا۔ کانگریس جیسی بڑی پارٹی آج مشکل دور میں ہے اور اس صورتحال سے نکلنے کےلیے جلد قدم اٹھائے جانے چاہیے۔

اس درمیان پارٹی کے سینیئر رہنما ملک ارجن کھڑگے نے بھی کسی کا نام لیے بغیر بیان دیا ہے اور محترمہ گاندھی اور مسٹر راہل نے پارٹی کو مستحکم کرنے کے لیے بہت محنت کی ہے لیکن بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے اشارے پر کچھ لوگ الٹی سیدھی باتیں کرتے ہیں۔ جب پارٹی اقتدار میں ہوتی ہے تو کوئی کچھ نہیں بولتا لیکن جب پارٹی اقتدار سے باہر ہوتی ہے تو بولنے والوں کا سیلاب آجاتا ہے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close