اپنا دیشتازہ ترین خبریں

کانگریس کا انتخابی منشور جاری، کسانوں کے لئے الگ سے بجٹ لانے کا وعدہ

کانگریس نے زرعی ترقی اور کسانوں کے مسائل کے حل کے لئے اپنے انتخابی منشور میں الگ سے بجٹ لانے کا وعدہ کیا ہے۔

کانگریس صدر راہل گاندھی نے دیگر سینئر رہنماؤں کے ساتھ یہاں پارٹی ہیڈکوارٹر میں انتخابات منشور ‘جن آواز’ جاری کرتے ہوئے کہا کہ ان کی پارٹی اقتدار میں آنے پر کسانوں کے لئے الگ سے بجٹ کا انتظام کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ کسانوں کو یہ معلوم ہونا چاہئے کہ ان کی فصلوں کی کم از کم امدادی قیمت کتنی بڑھے گی۔

مسٹر گاندھی نے کہا کہ بینک سے قرض لینے والے کسان جب قرض نہیں چکاتے ہیں تو ان کے خلاف فوجداری مقدمہ درج کیا جاتا ہے۔ ان کی پارٹی کی حکومت آنے پر اس نظام کو تبدیل کر دیا جائے گا اور کسانوں کو مجرمانہ معاملہ سے آزاد کیا جائے گا۔ فی الحال قرض ادا نہ کرنے والے کسانوں کو جیل میں ڈال دیا جاتا ہے جبکہ دوسری طرف کچھ صنعتکار قرض لے کر ملک چھوڑ کر فرار ہو جاتے ہیں۔

راہل گاندھی نے وزیر اعظم نریندر مودی پر گزشتہ لوک سبھا انتخابات میں لوگوں سے جھوٹے وعدے کرنے کا الزام لگاتے ہوئے آج کہا کہ کانگریس پارٹی کے منشور میں ایک بھی جھوٹا وعدہ نہیں کیا گیا ہے اور یہ مکمل طور پر حقیقت اور لوگوں کی خواہشات پر مبنی ہے۔

سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ، متحدہ ترقی پسند اتحاد کی صدر سونیا گاندھی، سابق وزیر خزانہ پی چدمبرم اور سابق وزیر دفاع اے کے انٹونی کی موجودگی میں لوک سبھا انتخابات کے لئے پارٹی کا منشور ‘جن آواز’ جاری کرتے ہوئے مسٹر گاندھی نے کہا کہ یہ دستاویز بند کمرے میں بیٹھ کر نہیں بلکہ ملک کے کونے کونے میں بیٹھے لاکھوں افراد سے بات چیت کی بنیاد پر تیار کیا گیا ہے.

انہوں نے کہا کہ منشور کمیٹی سے صاف صاف کہہ دیا گیا تھا کہ پارٹی ایسا کوئی وعدہ نہیں کرے گی جسے پورا کرنا ممکن نہیں ہے. اسی لیے صرف اس طرح کےوعدے کئے گئے ہیں جو حقیقی طور پر پورے کئے جا سکیں۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close