اپنا دیشتازہ ترین خبریں

ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف ’واپس جاؤ‘ کے نعرے

امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی ہندوستان کے دورے کے دوران گجرات میں جہاں ان کا شاندار استقبال کیا گیا وہیں ان کی مخالفت میں آج یہاں دھرنا مظاہرہ کیا گیا اور ان کے خلاف نعرے لگائے گئے۔

آل انڈیا پیس سالڈرٹي آرگنائزیشن کے ذریعہ منعقدہ اس مظاہرہ میں بائیں بازو کے رہنماؤں، مزدور تنظیموں کے لیڈروں کے علاوہ نوجوان طلبا اور کارکنوں نے شرکت کی۔ سی پی آئی کے جنرل سکریٹری ڈی راجہ، سی پی ایم پولٹ بیورو نیلوتپل باسو، دنیش وارشے وغیرہ نے مظاہرہین سے خطاب کیا۔ مسٹر راجہ نے کہا کہ ہندوستان کو آزاد خارجہ پالیسی پر عمل کرنا چاہئے۔ اسے اس دباؤ کے آگے نہیں جھکنا چاہئے۔ امریکہ ایران افغانستان، فلسطین سب جگہ ہندوستان کے مفادات کی مخالفت کرتا رہا ہے۔ اس نے ہمارے کاروبار کو بھی نقصان پہنچایا ہے۔ مظاہرین نے ٹرمپ واپس جاؤ، واپس جاؤ کے نعرے لگائے۔

پارٹی کے ریاستی کمیٹی کے رکن رام پھل نے کہا ہے کہ سامراجی لٹیروں کے سرغنہ امریکہ کے صدر کو ہندوستان میں بلاکر مرکز کی نریندر مودی حکومت کئی طرح کے ایسے تجارتی سمجھوتے کررہی ہے جن سے ملک کے زرعی، پولٹری، ڈیری، طبی آلات اور دوائیوں سمیت مختلف صنعتوں کو نقصان ہوگا اور اس کی وہ مخالفت کرتے ہیں۔

انہوں نے الزام لگایا کہ امریکہ گزشتہ تین برسوں سے ہندوستان کے بازار کو اپنے زرعی، ڈیری وپولیٹری پیداواروں، طبی آلات اور صنعتی سامانوں سے بازار کر بھر دینے کے لئے ہندوستانی حکومت پر دباؤ بنارہی ہے اور ہندوستانی حکومت کے امریکہ سے ہونے جارہے معاہدے کے تحت وہاں سے دودھ اور دودھ سے بنی چیزیں، پنیر، لسی وغیرہ اور سیب وآخروٹ، بادام جیسے پھل ومیوے، سوابین وکھانے کے تیل وغیرہ اناجوں کو ہندوستانی میں درآمد کی اجازت دی جائے گی۔ درآمد فیس 64 فیصد سے کم کرکے 10 فیصد تک کیا جائے گا۔ اس سے بڑی تعداد میں کسانوں سمیت پولٹری، ڈیری سمیت مختلف صنعتوں سے جڑے ملازمیں متاثر ہوں گے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close