اپنا دیشتازہ ترین خبریں

پی ایم مودی کا میسج صاف ہے، رافیل کے ارد گرد جو آئے گا اسے ختم کر دیا جائے گا: راہل گاندھی

کانگریس صدر راہل گاندھی نے رافیل معاملے سے منسلک دستاویز یکجا کررہے مرکزی تفتیشی بیورو(سی بی آئی) کے ڈائیریکٹر آلوک ورما کو زبردستی رخصت پر بھیجنے کے فیصلے کو وزیراعظم مودی کی گھراہٹ قراردیا اور کہا کہ وہ غیر آئینی اقدامات اٹھا رہے ہیں جس سے ملک اور آئین خطرے میں ہے۔

کانگریس صدر نے بدھ کو کہا کہ مسٹر مودی نے جس طرح سے سی بی آئی ڈائیریکٹر کو زبردستی چھٹی پر بھیجا ہے اس سے انہوں نے واضح کردیا کہ رافیل سودے سے منسلک گھوٹالے کے آس پاس آنے کی کوشش جو بھی کرے گا اسے ختم کردیا جائے گا اور اسے کہیں کا نہیں چھوڑیں گے۔ مسٹر گاندھی نے ٹویٹ کیا ’’سی بی آئی چیف آلوک ورما رافیل گھوٹالے کے کاغذات یکجا کررہے تھے۔انہیں زبردستی چھٹی پر بھیج دیا گیا۔وزیراعظم کا پیغام ایک دم صاف ہے ،جو بھی رافیل کے آس پاس آئے گا،ہٹا دیا جائےگا،مٹا دیا جائےگا۔ملک اور آئین خطرے میں ہے۔‘‘

اس سے پہلے کانگریس کے ترجمان ابھیشیک منو سنگھوی نے یہاں کپارٹی کی باقاعدہ پریس بریفنگ میں کہا کہ مودی حکومت نے سی بی آئی ڈائیریکٹرکو غیر قانونی طریقے سے ہٹایا ہے اور وہ ملزم کو بچانے میں مصروف ہے۔انہوں نے کہا کہ بی جےپی حکومت سی بی آئی کا غلط استعمال کررہی ہے اور کانگریس اس کی اس کوشش کی مذمت کرتی ہے۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close