تازہ ترین خبریںدلی نامہ

ٹکٹوں کی تقسیم پر کانگریس میں بغاوت شروع

راجکمار چوہان اور مہابل مشرا کا ٹکٹ کٹنے پر راہل گاندھی کی رہائش پر احتجاجی مظاہرہ

نئی دہلی (انور حسین جعفری)
پارلیمانی انتخابات 2019 کےلئے دہلی میں کانگریس کی جانب سے امیدواروں کا اعلان کرنے سے قبل ہی ٹکٹوں کی تقسیم پر رسہ کشی شروع وہ گئی ہے۔ دہلی میں کانگریس کی جانب سے ساتوں امیدوار طے کر لینے اور امیدواروں کی لسٹ سے دہلی کے سابق وزیر راجکمار چوہان اور سابق ایم پی مہابل مشرا کا ٹکٹ کاٹ دیئے جانے کی خبر پر ہنگامہ شروع ہو گیا ہے۔

ٹکٹوں کی تقسیم میں سابق رکن پارلیمنٹ مہابل مشرا اور راجکمار چوہان کو باہر کئے جانے پر ان کے حامی کانگریسی کارکنان نے اپنے غم وغصہ کا اظہار کرتے ہوئے کانگریس کے صدر راہل گاندھی کی رہائش کے باہر زبردست مظاہرہ کرتے ہوئے احتجاج درج کرایا۔ ہاتھوں میں راجکمار چوہان اور مہابل مشرا کی حمایت مٰن لکھی ہوئی تختیاں اٹھائے دونوں لیڈران کے حامی مظاہرین نے الزام لگایا کہ کانگریس پارٹی نے باہری لیڈروں کو امیدوار بنا دیا ہے۔ مظاہرین کا مطالبہ تھا کہ راجکمار چو ہان کو پارٹی شمال مغربی دہلی سے امیدوار بنائے، ساتھ ہی مغربی دہلی کے حلقہ سے سابق ایم پی مہابل مشرا کو ٹکٹ دیا جائے۔

بتا دیں کہ دہلی میں کانگریس اور عام آدمی پارٹی کے درمیان اتحاد کی ہاں نہ ہاں نہ کے درمیان ہی کانگریس کی جانب سے پہلے چار امیدواروں کے ناموں پر اعتماد جتایا گیا تھا اور دہلی کی چار سیٹوں پر آل انڈیا کانگریس کمیٹی (اے آئی سی سی ) کی مرکزی الیکشن کمیٹی (سی ای سی) کے اجلاس میں 11 اپریل کو ہی امیدوار طے کر دیئے گئے تھے۔ ان میں نئی دہلی سے اجے ماکن، چاندنی چوک سے کپل سبل، شمال مشرقی دہلی سے جے پرکاش اگروال اور شمال مغربی دہلی سے راجکمار چوہان کے نام پر مہر لگائی گئی تھی، جبکہ تین سیٹوں کا فیصلہ اس اجلاس میں نہیں ہو پایا تھا۔ لیکن اب یہ کہا جا رہا ہے کہ کانگریس نے دہلی کے تمام سات سیٹوں کے امیدواروں کے ناموں پر فیصلہ کر لیا ہے۔ جس میں پارٹی نے مہابل مشرا اور راجکمار چو ہان کا ٹکٹ کاٹ دیا گیا ہے۔ جس سے دونوں لیڈران کے حامی ناراض ہیں اور اسی ناراضگی کا اظہار کرنے کےلئے آ ج کانگریس کے صدر راہل گاندھی کی رہائش گاہ پر احتجاج کیا۔

باوسوق ذرائع کی اطلاع کے مطابق دہلی میں کانگریس اور عام آدمی پارٹی کے درمیان اتحاد نہیں ہو رہا ہے اور کانگریس کے صدر راہل گاندھی نے کانگریس کے ساتوں امیدواروں کے ناموں کی فہرست پر دستخط کرتے ہوئے مہر بھی لگا دی ہے۔ ان میں دہلی کانگریس کی صدر شیلا دکشت کا بھی نام شامل ہے۔ کانگریس کے امیدواروں کی نئی لسٹ کے مطابق اب نئی دہلی سیٹ سے اجے ماکن، جنوبی دہلی سیٹ سے رمیش کمار، مغربی دہلی سیٹ سے سشیل کمار، شمال مشرقی دہلی سیٹ سے جے پرکاش اگروال، شمال مغربی دہلی سے راجیش للوٹھیا، مشرقی دہلی لوک سبھا سیٹ سے اروندر سنگھ لولی اور چاندنی چوک سے شیلا دکشت کانگریس کے امیدوار ہوں گے۔ نئی لسٹ میں شمال مغربی دہلی سے راجکمار چوہان اور مغربی دہلی سے سابق ایم پی مہابل مشرا کا ٹکٹ کاٹ دیا گیا ہے۔ راجکمار چوہان کی جگہ دہلی کانگریس کے کار گزار صدر راجیش للوٹھیا اور مہابل مشرا کی جگہ سشیل کمار الیکشن لڑیں گے۔

بتا دیں کہ دہلی کے سات سیٹوں پر 12 مئی کو ووٹنگ ہونی ہے، جس کےلئے 16 اپریل سے پرچہ نامزدگی کا عمل شروع ہو گیا ہے، جس کی آخری تاریخ 23 اپریل ہے۔ لیکن ابھی تک کانگریس اور عام آدمی پارٹی میں اتحاد کےلئے کوئی اتفاق نہٰں ہو سکا ہے، جبکہ سیٹوں کی تقسیم پر کانگریس میں بھی بغاوت دکھائی دینی شروع ہو گئی ہے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close