تازہ ترین خبریںدلی نامہ

نظام الدین اولیاء کی درگاہ میں خواتین کے داخلے کی ممانعت پر حکومت سے جواب طلب

دہلی ہائی کورٹ نے حضرت نظام الدین اولیاء کی درگاہ میں خواتین کے داخلے کی ممانعت پر سخت موقف اختیار کرتے ہوئے مرکزی حکومت، دہلی حکومت اور درگاہ ٹرسٹ کو نوٹس جاری کرکے جواب مانگا ہے کہ خواتین کو درگاہ میں داخل ہونے کی اجازت کیوں نہیں دی جارہی ہے۔

چیف جسٹس راجندر مینن اور جسٹس وی کے راؤ نے معاملے کی سماعت کے بعد مرکز، دہلی حکومت اور درگاہ ٹرسٹ کی مینجمنٹ کمیٹی کو نوٹس جاری کر کے آئندہ 11اپریل تک جواب طلب کیا ہے۔

قانون کی تین طالبات نے عدالت سے اپنی درخواست میں کہا ہے کہ خواجہ نظام الدین اولیاء کی درگاہ میں خواتین کو رسائی کی اجازت نہیں ہے۔ درخواست گزاروں کے وکیل نے کہا کہ درگاہ کے باہر نوٹس بورڈ لگا ہے جس میں انگریزی اور ہندی میں واضح لکھا ہے کہ درگاہ کے اندر خواتین کو داخل ہونے کی اجازت نہیں ہے۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close