اپنا دیشتازہ ترین خبریں

مہاراشٹر: کانگریس کی ہلچل تیز، ممبران اسمبلی کو بھوپال منتقل کرنے کی تیاری

ممبران اسمبلی کو رکھنے کے لئے تلاش کئے جا رہے ہیں ہوٹل، منہ نہیں کھول رہے ہیں کانگریسی

مہاراشٹر میں اچانک توقع کے برخلاف ہو جانے اور صبح صبح بی جے پی کے ساتھ این سی پی اتحاد سے حکومت بننے کا جو واقعہ ہوا ہے، اس کے بعد سے کانگریس مکمل طور محتاط نظر آ رہی ہے اور کافی پھونک پھونک کر قدم رکھ رہی ہے۔ شاید، اسے اب لگنے لگا ہے کہ جس طرح سے مہاراشٹر کے گورنر نے دیویندر فڑنویس کو وزیر اعلیٰ اور این سی پی لیڈر اجیت پوار کو نائب وزیر اعلیٰ کا حلف دلایا، جس کی کسی کو کانوں کان خبر تک نہ ہو سکی، ایسے میں اب ان کے (کانگریس) ممبر اسمبلی بی جے پی این سی پی اتحاد کو اپنی حمایت نہ دے دیں۔ کہیں ایسا نہ ہو کہ جب ایوان میں اکثریت کے لئے ممبران اسمبلی کی پارٹی لائن پر گنتی ہو تو اعداد وشمار ہی بگڑ جائیں۔ لہٰذا کانگریس چاہتی ہے کہ ان کے کئی ارکان اسمبلی بالواسطہ طور دور رہ کر بی جے پی این سی پی کو حمایت دینے کے لئے ایوان میں موجودگی ہی نہ ہوں۔ کانگریس سے منسلک ذرائع نے اندرونی تیاری کے راز کھول دیئے ہیں اور کہا ہے کہ بھوپال میں ہوٹل طے کئے جانے کے لئے تلاش چل رہی ہے۔

کہا جا رہا ہے کہ اس خوف کی وجہ سے اب کانگریس نے نئی حکمت عملی بنائی ہے۔ تمام ممبران اسمبلی کو پارٹی لائن سے دور نہیں ہونے دینے اور انہیں تنظیم کی سطح پر اپنے سے جوڑے رکھنے کے لئے کانگریس نے سب کو مہاراشٹر سے لگی ریاست مدھیہ پردیش کے دارالحکومت بھوپال میں منتقل کرنے کی تیاری کر لی ہے۔ حالانکہ مدھیہ پردیش کے کانگریسی لیڈروں سے جب اس سلسلے میں بات کرنے کی کوشش کی گئی تو تمام لیڈر جواب دینے سے بچتے نظر آئے لیکن اس کے باوجود کانگریس سے منسلک ذرائع کے حوالے سے آنے والے خبروں کو صحیح مانا جائے تو مہاراشٹر کے تمام کانگریسی رکن اسمبلی آئندہ 2 دن میں بھوپال بھیج دیے جائیں گے۔ انہیں خصوصی سیکورٹی میں رکھے جانے کی تیاریاں خاموشی سے بھوپال میں کی جا رہی ہیں۔

قابل ذکر ہے کہ مہاراشٹر میں بڑا سیاسی الٹ پھیر اچانک ہوا اور گورنر بھگت سنگھ کوشیاری نے آج صبح راج بھون میں دیویندر فڑنویس کو وزیر اعلیٰ اور اجیت پوار کو نائب وزیر اعلیٰ کے عہدے کا حلف دلایا۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close