تازہ ترین خبریںدلی نامہ

مولانا آزاد کے یوم پیدائش پر پیش کی گئی خراج عقیدت

ریاستی سبھاش چوپڑا نے مولانا آزاد کی تصویر کی گل پوشی کرکے پیش کی خراج عقیدت

نئی دہلی (انور حسین جعفری)
ملک کے پہلے مرکزی وزیر تعلیم مولانا ابو الکلام آزاد کے یوم پیدائش آج ملک بھر میں جوش و خروش کے ساتھ منایا گیا۔ جہاں آج جامع مسجد سے منسلک مینا بازار میں واقع مولانا کے مزار پر منعقدہ دعایہ جلسہ میں بڑی تعداد میں لو گوں نے شرکت کر کے مزار پر گل پوشی، قرآن خوانی اور دعاء کی گئی، وہیں مو لانا آزاد کے یو م پیدائش پر آج دہلی پر دیش کانگریس دفتر میں بھی ملک کے پہلے وزیر تعلیم مولانا آزاد کو خراج عقیدت پیش کی گئی۔

آج ریاستی صدر سبھاش چوپڑہ نے راجیو بھون میں منعقدہ جلسہ میں مو لانا آزاد کی تصویر کی گل پو شی کی اور انہیں خراج عقیدت پیش کی۔اس موقع پر پروگرام میں موجود کانگریسی لیڈران اورکارکنان نے بھی مولانا آزاد کی تصویر کی گل پوشی کی اور انہیں خراج عقیدت پیش کیا۔ اس موقع پر ریاستی صدر سبھاش چوپڑہ نے کہا کہ مولانا ابو الکلام آزاد ایک عظیم مجاہد آزادی تھے۔ وہ ایک دانشور ہونے کے ساتھ ایک شاعر اور صحافی بھی تھے۔ جو ’الہلال‘ کے نام سے اردو اخبار نکالتے تھے۔ انہوں نے مذہبی شدت پسندی سے نجات پانے کیلئے اپناعرف نام ’آزاد‘رکھ لیا۔ملک کی آزادی کے بعد مولانا ابو الکلام آزاد ہندوستان کے پہلے وزیر تعلیم بنے۔

چوپڑہ نے کہا کہ مولانا آزاد عدم تعاون تحریک سے لے کر 1942 تک’انگریزوں بھارت چھوڑو‘ آندولن تک متعددمرتبہ گرفتار بھی ہوئے۔1923 اور 1940 میں وہ انڈین نیشنل کانگریس کے صدارت کے عہدہ پر فائزرہے۔مو لاناآزاد صاف خیالات کے مالک تھے۔سبھاش چوپڑہ نے کہا کہ مولانا آزاد کا یہ ماننا تھا کہ جب سبھی مذاہب ایک ہی مالک کو حاصل کرنے کا راستہ دکھاتے ہیں تو ان میں آپسی جھگڑا کیوں ہے؟آزادی کے بعد وزیر تعلیم کے طور پر انہوں گیارہ برس تک قومی پالیسی کو راہ دکھائی۔

سبھاش چوپڑہ نے کہا کہ مو لانا آزاد نے پہلے وزیر تعلیم بننے پر مفت تعلیم،تعلیم کے فروغ اور اعلی تعلیمی اداروں کے قیام پر خاص زور دیا۔ مولانا آزاد نے آئی آئی ٹی اور یونیورسٹی گرانڈ کمیشن (یو جی سی)کے قیام میں بھی اپنا کلیدی کردار ادا کیا۔ انہوں نے سنگیت ناٹک اکادمی، ساہتیہ اکادمی اور للت کلا اکادمی کی بنیاد بھی اپنے دور اقتدار میں رکھی۔ 1951 میں انڈین انسٹی ٹیوٹ آف ٹکنالوجی کھڑگپور کا قیام بھی انہیں کی دین ہے۔ اسی کڑی میں بعد میں ممبئی، چنئی، کانپور اور دلی میں بھی آئی آئی ٹی کا قیام ہوا۔ مولانا آزاد نے ملک میں تعلیم کو نئی راہ دکھائی، جس پر آج بھی ملک گا مزن ہے۔

اس موقع پر دہلی مہیلا کانگریس کی صدر شرمشٹھا مکھرجی، سابق مرکزی وزیر کرشنا تیرتھ، دہلی کے سابق وزیر ڈاکٹر نریندر ناتھ، راجیش للوٹھیا، کونسلر مکیش گوئل سمیت دیگر عہدیدار و کارکنان نے مو لانا کو خراج عقیدت پیش کیا۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close