اپنا دیشتازہ ترین خبریں

ممتا کی ریلی میں پہنچے شتروگھن سنہا، بی جے پی نے ان کے خلاف کارروائی کے دیئے اشارے

بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی ) نے ترنمول کانگریس اور مغربی بنگال کی وزیراعلی ممتابنرجی کی ریلی کو ’سیاسی موقع پرستی‘ بتایا اور اسٹیج پر پارٹی کے رکن پارلیمنٹ شتروگھن سنہا کی موجودگی کا نوٹس لیتے ہوئے ان کے خلاف کارروائی کے اشارے بھی دیئے۔

کولکاتہ کے برگیڈ میدان میں منعقد یہ ریلی ایک طرح سے ملک کی سیاست میں غیر این ڈی اے پارٹیوں کی طرف سے طاقت کا مظاہرہے۔ ریلی میں نیشنلسٹ کانگریس پارٹی کے شردپوار، نشنل کانفرنس کے فاروق عبداللہ اور عمر عبداللہ، سماج وادی پارٹی کے سربراہ اکھلیش یادو، عام آدمی پارٹی کے قومی کنوینر اروندکیجری وال، کانگریس کے ملک ارجن کھڑگے اور ابھیشیک منو سنگھوی، جنتادل (ایس )کے لیڈراور سابق وزیراعظم ایچ ڈی دیوے گوڑا اور کماراسوامی، تیلگودیشم پارٹی کے سربراہ این چندربابو نائیڈو، بی جےپی کے سابق ارکان پارلیمان ارون شوری اور یشونت سنہا اور راشٹریہ جنتا دل کے تیجسوی یادو، راشٹریہ لوک دل کے جینت چودھری ،ڈی ایم کے کے لیڈر ایم کے اسٹالن اور لوک تانترک جنتا دل کےشردیادو موجود تھے۔

بی جےپی کےترجمان راجیوپرتاپ روڈی نے یہاں پارٹی ہیڈکوارٹر میں صحافیوں سے کہا ’’یہ سبھی پارٹیاں صرف ایک شخص (وزیراعظم نریندرمودی) کے خلاف اپنے ذاتی مفاد ات کی وجہ سے متحد ہوئے ہیں۔ لیکن، عوام سمجھدار ہیں اور انکے فریب میں نہیں آئیں گے۔‘‘ انھوں نے اسے ’سیاسی موقع پرستی‘ قراردیتے ہوئے کہا،’’یہ جو پچاس پچپن لوگ وہاں جمع ہوئے ہیں، میں یہ جاننا چاہتا ہوں کہ انکا لیڈر کون ہے۔‘‘

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close