اپنا دیشتازہ ترین خبریں

ملک کے 70 اہم اداروں میں 3000 سائنس دانوں کے عہدے خالی

ملک میں اہمیت کے حامل 70سائنٹیفک اداروں میں تقریبا 3000 سائنس دانوں کے عہدے خالی ہیں۔ سائنس وٹکنالوجی کے وزیر ہرش وردھن نے جمعہ کو لوک سبھا میں ایک سوال کے تحریری جواب میں بتایاکہ ملک میں سائنس اور ٹکنالوجی کی وزارت سے منسلک 70 اداروں میں 2911 سائنس دانوں کے عہدے خالی ہیں۔

کونسل آف سائنٹیفک اینڈ انڈسٹریل ریسرچ کے ہیڈکوارٹر میں ہی 92 سائنس دانوں کے عہدے خالی ہیں۔ پانچ سائنٹیفک اداروں میں تو 100،100سے زائد عہدے خالی ہیں۔ ان میں سب سے زیادہ 177 عہدے بنگلورو کے ادارے ‘فورتھ پیراڈائم’ میں خالی ہیں۔ اس کے بعد دوسرے نمبر پر نیشنل کیمیکل لیباریٹری پونے ہے جس میں 123 سائنس دانوں کے عہدے خالی ہیں۔ سنٹرل فوڈ ٹیکنالوجیکل ریسرچ انسٹی ٹیوٹ میسور میں 111 عہدے، سنٹرل کیمیکل ٹکنالوجی حیدرآباد میں 102 اور نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف اوشینوگرافی، گوا میں 100 عہدے خالی ہیں۔

مسٹر ہرش وردھن نے کہاکہ جب سائنس دانوں کے عہدے خالی ہوتے ہیں،متعلقہ ادارہ یا لیباریٹریز ضابطہ کے مطابق تقرریوں کی پہل کرتی ہیں۔ انھوں نے بتایاکہ بایوٹکنالوجی محکمہ خاتون سائنس دانوں کی بایوٹکنالوجی ریسرچ میں شراکت داری بڑھانے کے لیے خاتون سائنس دانون کے لیے‘ کریئر ایڈوانسمنٹ اینڈری اورئینٹیشن پروگرام ’نافذ کر رہا ہے۔ یہ پروگرام جنوری 2011میں شروع کیا گیا تھا۔ اس پروگرام کے تحت 315 خاتون سائنس دانوں کی مدد کی گئی۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close