بہار- جھارکھنڈتازہ ترین خبریں

ملک نے نہ صرف ایک عالم دین کھویا بلکہ ایک بہترین قلمکار سے بھی محروم ہوگیا: حقانی القاسمی

معروف قومی و ملی رہنما اور رکن پارلیمان مولانا اسرارالحق قاسمی کے انتقال کو سماجی، سیاسی، علمی اور صحافتی خسارہ قرار دیتے ہوئے مشہور نقاد حقانی القاسمی نے کہا کہ ان کے انتقال کی وجہ سے ملک نے نہ صرف ایک عالم دین کھویا ہے بلکہ ایک بہترین قلمکار سے بھی محروم ہوگیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ مولانا کی زندگی علمی جدوجہد، سماجی کاموں میں شمولیت، مسلمانوں کے مسائل کے تئیں فکرمندی اور ان کی تعلیمی، سیاسی اور معاشی صورت حال کے لئے غور وفکر سے عبارت رہی ہے اور ہمیشہ انہیں اسی سوچ میں پایا۔ انہوں نے کہا کہ مولانا کا خیال تھا کہ مسلمان اپنے بنیادی فکری محوراور تہذیبی منطقہ سے دور ہوگیا ہے اور ذیلی اور فروعی مسائل میں الجھ کر رہ گیا ہے۔ جس کی وجہ سے بنیادی مسائل کی طرف توجہ نہیں کر پاتے۔

حقانی القاسمی جو سیمانچل میڈیا منچ کے نائب صدر بھی ہیں، نے کہا کہ مولانا کے اندر ایک ہی جذبہ کار فرما رہا کہ مسلمان کسی طرح تعلیمی، سیاسی، ثقافتی میدان میں آگے بڑھیں اور تساہلی کا لبادہ اتار پھینکیں۔ انہوں نے کہاکہ مولانا کے دل میں مسلمانوں کیلئے پے پناہ درد تھا اور اپنی تحریروں اور تقریروں، نشستوں کے ذریعہ مسلمانوں کواس دلدل سے نکالنے کے لئے غور و فکر کرتے تھے۔ این سی پی یو ایل سے وابستہڈاکٹر توقیر احمد راہی نے بھی مولانا کی وفات پر گہرے رنج وغم کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ اس خطے میں پیدا ہونے والے ایسے رہنما تھے جو پورے ملک میں یکساں مقبول تھے۔ وہ جہاں علمائے کے درمیان قدر کی نگاہ سے دیکھے جاتے تھے وہیں عصری تعلیم یافتہ میں اپنی منفرد شناخت رکھتے تھے۔

این سی پی یو ایل کے اسسٹنٹ ایجوکیشن افسر ڈاکٹر فیروز عالم نے کہاکہ مولانا کی ذات سیمانچل ہی نہیں بلکہ پورے ملک کے لئے روشنی کا مینارہ تھی اور مولانا نے اپنے آپ کو کبھی کبھی رکن پارلیمنٹ کے طور پر پیش نہیں کیا بلکہ جس سے بھی ملتے تھے انکساری سے ملتے تھے۔ انہوں نے کہا کہ اس کا اندازہ مولانا کے انتقال کے بعد لوگوں کے جذبات سے لگایا جاسکتا ہے۔ این سی پی یوایل سے ہی وابستہ محمد مجیب نے بھی مولانا قاسمی کے انتقال پر تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مولانا گوناگوں خوبیوں کے مالک تھے اور ان کے انتقال سے مسلم لیڈر شپ میں ایک خلا پیدا ہوگیا ہے۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close