اپنا دیشتازہ ترین خبریں

مسلمانوں کو اپنے کردار میں تبدیلی لانے کی ضرورت: محمود مدنی

موجودہ وقت مسلم نوجوانوں سے اس بات کا طالب ہے کہ وہ اپنے کردار میں تبدیلی لائیں اور پوری ہمت و حوصلہ کے ساتھ حالات سے مایوس ہوئے بغیر پوری حکمت عملی کے ساتھ 20 سال کی منصوبہ بندی کر کے اس پر عمل کرنے کی ضرورت ہے۔ ان خیالات کا اظہارجمعیت علمائے ہند کے جنرل سکریٹری محمود اسعد مدنی نے دیر شام مصطفی آباد صحن میں قرقہ واریت اور قومی اتحاد کے موضوع پر منعقد پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

مولانا نے اپنے خطاب میں کہا کہ مسلمانوں نے ترقی کے ہر محاذ پر اپنا کردار بخوبی ادا کیا ہے۔ آج پھر وقت ان سے اس بات کاطالب ہے کہ موجودہ حالا ت کا سامنا کرنے کے لئے مسلمانوں کو اپنے کردار میں تبدیلی لانے کی ضرورت ہے۔ مولانا نے مزید کہا کہ’’مسلمان وہ قوم ہیں جو 70 سال قبل نہ کے برابر تھی، لیکن آج انہوں نے اپنی محنت،لگن اور جستجو سے ایک مقام حاصل کیا ہے۔ ایک وقت تھا کہ جب مسلمانوں میں جنازہ کی نماز پڑھانے کے لئے امام نہیں ملتا تھا۔ امام کے نہ ہونے کی وجہ سے لاش رکھی رکھی سڑنے لگنے تھی اور بغیر نماز جنازہ کی ادائیگی کے اسے دفن کرنا پڑتا تھا۔لیکن حالات میں تبدیلی آئی اور مسلمانوں نے دینی اور دنیوی تعلیم کی طرف توجہ کی اور حالات میں تبدیلی آئی۔

مولانا نے موجوہ حالات کے بارے میں لوگوں کو آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ اس زمانے کو یاد رکھیں ، حالات سے ڈرنے کی ضرورت نہیں ہے۔ اس سے نبرد آزما ہونے کے لئے اپنے آپ کو تیار کریں اور اپنے کردار میں تبدیلی لائیں۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close