اپنا دیشتازہ ترین خبریں

لوک سبھا انتخابات 2019: دوپہر 3 بجے تک 46.52 فیصد پولنگ

لوک سبھا انتخابات کے چھٹے مرحلے میں دوپہر 12 بجے تک 25.07 فیصد ووٹروں نے اپنے ووٹ کے حق کا استعمال کیا۔

موصول اطلاعات کے مطابق اس وقت تک مغربی بنگال میں سب سے زیادہ 38.08 فیصد ووٹروں نے ووٹ ڈالے ۔ جھارکھنڈ 31.27 فیصد ، مدھیہ پردیش میں 28.01 فیصد، ہریانہ میں 23.25 فیصد، اترپردیش میں 21.75 فیصد، بہار میں 20.70 فیصد اور دہلی میں 19.51 فیصد ووٹ ڈالے گئے۔ دہلی، بہار اور اتر پردیش میں صبح کے وقت پولنگ کی رفتار سست رہی، لیکن اب آہستہ آہستہ وہاں ووٹر اپنے گھروں سے نکل کر ووٹ ڈالنے کے لئے آ رہے ہیں۔

خبروں کے مطابق لوک سبھا انتخابات کے چھٹے مرحلے میں راجدھانی دہلی کی سات لوک سبھا سیٹوں کے لئے اتوار 3 بجے تک 36.73 فیصد پولنگ ہوئی ہے۔

خبروں کے مطابق صبح 11 بجے تک چاندنی چوک میں 16.87 فیصد، مشرقی دہلی میں 20.09 فیصد، نئی دہلی میں 11.96 فیصد، شمال مشرقی دہلی میں 18.70 فیصد، شمال مغرب دہلی میں 12.81 فیصد، جنوبی دہلی میں 15.75 فیصد اور مغربی دہلی میں 18.28 فیصد ووٹنگ ریکاڈ کی گئی۔ قومی دارالحکومت کے 1.43 کروڑ ووٹر سات لوک سبھا سیٹوں کے 13800 پولنگ مراکز پر ووٹ ڈالیں گے ۔دہلی کی ساتوں سیٹوں پر بھارتیہ جنتا پارٹی، کانگریس اور عام آدمی پارٹی کے درمیان سہ رخی مقابلہ ہے۔

تمام لوک سبھا سیٹوں پر صبح سات بجے پولنگ شروع ہو گئی جو شام چھ بجے تک جاری رہے گی۔ دارالحکومت کے تمام پولنگ مراکز پر سکیورٹی کے پختہ انتظامات کئے گئے ہیں۔ مختلف مقامات پر پولنگ شروع ہونے سے پہلے ہی پولنگ مراکز پر ووٹروں کی قطاریں لگنی شروع ہو گئی۔ مختلف پارٹیوں کے کل 164 امیدواروں کی قسمت آج الیکٹرانک ووٹنگ مشین میں بند ہو جائے گی۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close