اترپردیشتازہ ترین خبریں

لوک سبھا انتخابات میں جیتے 233 لیڈروں پر مجرمانہ ریکارڈ

سیاست کو جرم سے پاک کرنے کی تمام کوششوں کے باوجود الیکشن جیت کر 17ویں لوک سبھا کے رکن بنے لیڈروں میں سے 233 (43فیصد) کے خلاف مجرمانہ معاملات درج ہیں۔

یاد رہے کہ نامزدگی داخل کرتے وقت دیئے گئے حلف ناموں سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ جیتنے والے امیدواروں میں سے 159(29فیصد) کے خَاف سنگین مجرمانہ معاملات درج ہیں۔ ان میں عصمت دری، قتل، قتل کی کوشش، اغوا اور خواتین کے خلاف جرائم وغیرہ شامل ہیں۔

نیشنل الیکشن واچ کے تخمینہ کے مطابق دس نومنتخب اراکین پارلیمنٹ نے تو مجرمانہ معاملات میں سزا ہونے کی بات تک قبول کی ہے۔ ان میں سے پانچ بھارتیہ جنتا پارٹی کے ٹکٹ پر منتخب ہوئے ہیں جبکہ چار کانگریس اور ایک وائی ایس آر کانگریس کے امیدوار طورپر جیتے ہیں۔ ان میں سے چار ترقی پسند ریاست کیرالہ سے جبکہ دو مدھیہ پردیش سے اور ایک ایک امیدوار اترپردیش، راجستھان، مہاراشٹر اور آندھراپردیش ے کامیاب ہوئے ہیں۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close