اپنا دیشتازہ ترین خبریں

علی گڑھ میں ’راجا مہندر پرتاپ سنگھ یونیورسٹی‘ قائم کرنے کا فیصلہ

اترپردیش حکومت نے پیر کو کابینہ کی ہوئی میٹنگ میں گڑھ میں راجا مہندر پرتاپ سنگھ ریاستی یونیورسٹی کے قیام کے لئے زمین فراہم کرنے کی تجویز کو منظوری دی ہے۔ اس نئی یونیورسٹی کے قیام کے بعد علی گڑھ، کاس گنج، ہاتھرس اور ایٹہ اضلاع کے تمام کالجز اس ریاستی یونیورسٹی کے ماتحت ہوں گے۔ تاہم جب کہ یونیورسٹی قائم نہیں کی جاتی ہے ان اضلاع کے کالجز ڈاکٹر بھیم راؤ امبیڈکر یونیورسٹی آگرہ کے ماتحت ہوں گے۔

کابینہ نے ریاست کے نیم۔شہری علاقوں کے نگر پالیکا اور نگر پنچایت علاقوں میں ہاوس، پانی اورسیویج ٹیکس لگانے کے لئے نگر پالیکا ایکٹ میں ترمیم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ریاستی حکومت کے ترجمان و وزیر توانائی سری کانت شرما نے کہا کہ ایک مہینے میں نئے شفاف اور آسان ٹیکس سسٹم کا ایک ڈرافٹ نوٹیفکیشن جاری کیا جائے گا اور اس پراعتراضات کی ازالہ کے بعد اگلے چھ مہینے میں اسے نافذ کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ یہ ٹیکس سسٹم نگر نگم کے ٹیکس کی طرح ہوگا۔

کابینہ نے میٹنگ میں ریاست کے مدارس میں تعلیم کے میعارمیں بہتری کے لئے نئی اسکیم کو منظوری دی ہے۔ اس کے تحت213 کروڑ روپئے خرچ کئے جائیں گے جس میں سے 60 فیصدی گرانٹ مرکزی حکومت دے گی۔ ریاست کے تقریبا 7442 مدارس اس اسکیم سے مستفید ہوں گے۔ حکومت نے میٹنگ میں میرٹھ سے سنبھولی اور رامپور سے سنبھل تک پاور ٹرانسمشن لائن کو منظوری دی ہے۔ جوکہ پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ(پی پی پی) ماڈل کے تحت 2021 تک بنایا جائے گا جس سے مغربی یو پی کے 13 اضلاع مستفید ہوں گے۔

ریاستی حکومت نے امبیڈکر اسپیشل جاب اسکیم کا نام بدل کربابا صاحب بھیم راؤ امبیڈکر اسپیشل جاب اسکیم کردیا ہے جو کہ اب وزارت زراعت کے بجائے وزارت دیہی ترقیات کے تحت ہوگا۔حکومت نے ضلع گورکھپور میں میونسپل کارپوریشن کی نئی عمارت تعمیر کرانے کے لئے 23.45 کروڑ روپئے کو منظوری دی ہے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close