اپنا دیشتازہ ترین خبریں

عزت ملنے پر ہی بی ایس پی عظیم اتحاد کا حصہ بنے گی، ورنہ تنہا میدان میں جانے کےلئے تیار ہے: مایاوتی

لوک سبھا انتخابات سےپہلے بھارتیہ جنتا پارٹی(بی جےپی)کے خلاف عظیم اتحاد کی کوشش میں لگے اپوزیشن کو آگاہ کرتے ہوئے بہوجن سماج پارٹی(بی ایس پی)کی صدر مایاوتی نے کہا کہ نشستوں کی باعزت تعداد ملنے پر ہی ان کی پارٹی اتحاد کا حصہ بننے کو راضی ہوگی۔

محترمہ مایاوتی نے اتوار کو یہاں نامہ نگاروں سے کہا’’بی ایس پی اتحاد کے خلاف نہیں ہے،لیکن وہ اپنی عزت کے ساتھ بھی سمجھوتہ نہیں کرےگی۔ اگر پارٹی کو قابل عزت تعداد میں نشستیں ملتی ہیں تو اتحاد پر کوئی اعتراض نہیں ہے ورنہ بی ایس پی انتخابی میدان میں تنہا جانے کےلئے تیار ہے۔ انہوں نے کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی کی مرکزی حکومت اور ریاستی حکومتیں کی غلط پالیسیوں کو یاد دلانا چاہتی ہوں. جیسے جیسے لوک سبھا اور کئی ریاستوں میں اسمبلی انتخابات قریب آ رہے ہیں بی جےپی لبھانے والے وعدے کر رہی ہے.

مایاوتی نے کہا کہ بی جےپی نے کئی انتخابی وعدے کو پورا نہیں کیا ہے. اب عوام انکے جھانسے میں آنے والے نہیں ہیں. بھارتیہ جنتا پارٹینے ملک کے کروڑوں غریبوں، مزدوروں، کسانوں، بے روزگاروں کے ساتھ وعدہ خلافی کی ہے. انہوں نے کہا کہ بی جے پی کی مرکز اور ریاست کی سرکاریں اپنی ناکامیوں کو چھپانے کے لئے طرح طرح کی حکمت عملی اپنا رہی ہے.

محترمہ مایاوتی نے کہا کہ بی جے پی نے غلط پالیسیوں سے 100 سے زائد غریبوں کی جان لے لی ہے. نوٹ بندی ایک قومی سانحہ ثابت ہوا ہے. نوٹ بندی کا فیصلہ غلط طریقے سے کیا گیا. اس سے بےروزگاری بڑھی ہے، چھوٹے صنعت بند ہو گئے. انہوں نے کہا کہ ڈیزل-پیٹرول، رسوئی گیس کی قیمتیں بڑھتی ہی جا رہی ہیں.

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close