تازہ ترین خبریںدلی نامہ

عام آدمی پارٹی اور کانگریس میں نہیں ہوگا اتحاد

اتحاد کی آخری کوشش بھی ہوئی ناکام، سنجے سنگھ بولے اپنے دم پر لڑیں گے انتخاب............18 اپریل سے ’آپ‘ امیدوار پرچہ نامزدگی داخل کرنا کریں گے شروع

نئی دہلی (انور حسین جعفری)
2019 کے پارلیمانی انتخابات میں بی جے پی کو شکست دینے کو بے قرار کانگریس اور عام آدمی پارٹی کے درمیان کسی صورت اتحاد ہوتا نظر نہیں ا ٓرہا ہے۔ کانگریس اور عام آدمی پارٹی کے درمیان اتحاد کرانے کی آخری کو شش بھی ناکام ثابت ہو رہی ہے۔ اب دہلی میں ’آپ‘ اور کانگریس کے درمیان کوئی اتحاد نہیں ہوگا۔ اتحاد کے لئے ’آپ‘ کی جانب سے بات چیت کےلئے مقرر کئے گئے ’آپ‘ سینئر لیڈر سنجے سنگھ نے واضح کر دیا ہے کہ ’آپ ‘اور کانگریس میں اتحاد نہیں ہو گا۔ وہیں عام آدمی پارٹی کے دہلی کنوینر گو پال رائے نے بھی 18 اپریل سے عام آدمی پارٹی کے تمام ساتوں سیٹوں کے امیدواروں کے پرچہ نامزدگی داخل کرانے کی بھی شروعات کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔ جو خود اس بات کو واضح کرتا ہے کہ اب کانگریس اور ’آپ‘ کے درمیان اتحاد نہیں ہوگا۔

’آپ‘ سینئر لیڈر اور رکن پارلیمنٹ سنجے سنگھ کا کہنا ہے کہ کہیں بھی معاہدے کی کوئی امید نہیں ہے اور ہم اپنے دم پر انتخابات میں مقابلہ کریں گے۔ سنجے سنگھ نے کہا کہ بی جے پی کو روکنے کےلئے ہم کانگریس کے ساتھ اتحاد کرنے کےلئے تیار تھے لیکن کانگریس اس کے موڈ میں نہیں ہے۔ یہ افسوس کی بات ہے کہ ہماری کئی کوششوں کے باوجود کانگریس کسی معاہدے کےلئے تیار نہیں ہے۔ تمام کوششوں کے باوجود کچھ بات نہیں بنی۔ ہریانہ میں 6-3-1 فارمولہ دیا گیا تھا، غلام نبی آزاد جی اور بھپندر ہڈا کے بیان سے واضح ہے کہ وہ اتحاد نہیں چا ہتے۔ غلام نبی آزاد سے میٹنگ ہوئی، لیکن لگتا نہیں کہ بی جے پی کو روکنے کےلئے وہ سنجیدہ ہوں۔ ہم دہلی میں 4-3 کے لئے تیار ہو گئے تھے، لیکن کانگریس معاہدے کے موڈ میں نہیں ہے۔

یہاں یہ بتانا بھی ضروری ہے کہ دونوں ہی جماعتوں میں اتحاد کےلئے کوششیں کی جا رہی تھیں۔ خود کانگریس کے صدر راہل گاندھی کی جانب سے دہلی میں ’آپ‘ کو چار سیٹیں دینے کی پیش کش کے بعد عام آدمی پارٹی نے اپنے سینئر لیڈر سنجے سنگھ کو بات چیت کےلئے مقرر کیا تھا، جبکہ کانگریس کی جانب سے سینئر لیڈر احمد پٹیل کو بات کرنی تھی جو این سی پی کے سربراہ شردپوار کے توسط سے ہونی تھی۔ لیکن اطلاع یہ بھی ہے یہ بات چیت نہیں ہو سکی ہے، جس میں دہلی کے علاوہ ہریانہ، پنجاب، چنڈی گڑھ میں اتحاد کرنے کا عام آدمی پارٹی کا مطالبہ آڑے آ رہا ہے۔ جس کے بعد ’آپ‘ لیڈر سنجے سنگھ کی جانب سے یہ بیان آ گیا ہے کہ دہلی میں عام آدمی پارٹی اور کانگریس میں اتحاد نہیں ہو گا۔

ادھر اتحاد کی صورت نظر نہ آنے پر عام آدمی دہلی کے کنوینر گو پال رائے نے بھی عام آدمی پارٹی کے دہلی کی تمام ساتوں سیٹوں کے امیدواروں کے پرچہ نامزدگی داخل کرانے کا بھی اعلان کر دیا ہے۔ جس کی تیاری شروع ہو گئی ہے اور ’آپ‘ امیدواروں میں پہلا پرچہ نامزدگی کل 18 اپریل جمعرات کو داخل کیا جائے گا۔ گوپال رائے کے مطابق’ آپ‘ امیدواروں کے نامزدگی داخل کرنے کا عمل شروع ہو رہا ہے۔ نامزدگی سے قبل’ آپ‘ امیدوار روڈ شو کریں گے جس میں پارٹی کے سینئر لیڈران بھی شامل ہوں گے۔

’آپ‘ کے مطابق 18 اپریل کو پہلی نامزدگی مغربی دہلی کے امیدوار بلویر جھاکھڑ داخل کریں گے۔ اس کے بعد 20 اپریل کو 3 لوک سبھاؤں کے امیدوار اپنی نامزدگی داخل کریں گے، جن میں شمالی مغربی دہلی کے گگن سنگھ، مشرقی دہلی سے امید وار آتشی اور چاندنی چوک سے امیدوار پنکج گپتا پرچہ نامزدگی داخل کریں گے۔

جبکہ 22 اپریل کو شمال مشرقی دہلی کے امیدواروں دلیپ پانڈے، نئی دہلی سے امیدوار برجش گوئل ور جنوبی دہلی کے راگھو چڈا انتخابات کےلئے پرچہ نامزدگی داخل کریں گے۔ گوپال رائے نے کہا کہ نامزد داخل کرنے سے قبل یہ امیدوار بھی سینئرلیڈران کے ساتھ روڈ شو کریں گے۔ روڈ شو کےلئے روٹ چارٹ حتمی شکل دی جا رہی ہے۔ وہیں یہ بھی طے کیا جا رہا ہے کہ کس روڈ شو میں کون سا لیڈر موجود رہنا ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی کے تمام امیدواروں کے پرچہ نامزدگی داخل کر نے کے عمل کو 22 اپریل تک مکمل کر دیا جائے گا۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close