اترپردیشتازہ ترین خبریں

طالبہ کی خودکشی معاملہ: پرینکا گاندھی کا یوگی کے نام خط

اترپردیش کے ضلع مین پوری کے ایک’ نودے ودیالے‘ کے ہاسٹل میں پھانسی کے پھندے پر لٹکی پائی گئی طالبہ انوشکا کی موت کی جانچ جلد از جلد کرانے کے لئے کانگریس جنرل سکریٹری(مشرقی یو پی کی انچارج) پرینکا گاندھی واڈرا نے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ کو ایک خط لکھا ہے۔

کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا نے28 نومبر کو لکھے گئے اپنے خط میں لکھا ہے کہ’نودے ودیالے کا واقعہ دل دہلانے وا لا ہے۔ ریاست کی تمام تعلیمی اداروں میں زیر تعلیم طالبات کی سیکورٹی کو یقینی بنانا ضروری ہے۔ متأثرہ کے کنبے کو انصاف ملنا چاہئے۔

پرینکا نے لکھا ہے کہ طالبہ کی لاش مشتبہ حالت میں پھانسی کے پھندے سے لٹکی ہوئی ملی تھی۔ جس سر دست خودکشی کا معاملہ مان لیا گیاتھا۔ جبکہ پوسٹ مارٹم رپورٹ میں جسم پر چوٹ کے نشان بھی پائے گئے تھے۔ متأثرہ کے والدین کی غیر موجودگی میں طالبہ کی لاش ضلع انتظامیہ نے غیر قانونی طریقے سے پانی میں پھینک دیا تھا۔

متأثرہ کی اہل خانہ کی جانب سے لگاتار پولیس کی کاروائی پر سوال اٹھائے جاتے رہے ہیں۔ جانچ کا مطالبہ کررہے ہیں لیکن حادثے کے دو ماہ کے بعد بھی ابھی تک کوئی جانچ نہیں ہوئی ہے۔ نامزد ایف آئی آر درج ہونے کے بعد بھی کوئی ایکشن نہیں لیا گیا ہے۔

قابل ذکر ہے کہ آگرہ باشندہ سبھاش چندر پانڈے کی بیٹی انوشکا پانڈے بھوگ گاؤں واقع نودے ودیال میں گیارہویں جماعت کی طالبہ تھیں۔انوشکا کی لاش گذشتہ 16 ستمبر کو ودیالے کے پوجا ہاسٹل میں پھانسی کے پھندے سے لٹکی ہوئی ملی تھی۔کالج انتظامیہ کے ساتھ ضلع انتظامیہ اسے خودکشی بتا رہا ہے لیکن اہل خانہ کالج انتظامیہ پر قتل کا الزام لگا رہے ہیں۔

اہل خانہ کے مطابق گذشتہ کچھ دنوں سے انوشکا کو کالج میں پریشان کیا جارہاتھا۔انوشکا نے یہ بات اہل خانہ کو بتائی تھی۔طالبہ کے ہاتھ پر موبائل نمبر اور نام لکھا ملا تھا جسے بگاڑنے کی کوشش کی گئی تھی۔ اس معاملے کے حوالے سے سیاست اس وقت تیز ہوگئی جب انوشکا کے اہل خانہ نے انصاف کا مطالبہ کرتے ہوئے ہڑتال پر بیٹھ گئے۔ تقریبا 10۔12 دن قبل سابق وزیر جتن پرساد نے ملاقات کی تھی۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close