اپنا دیشتازہ ترین خبریں

ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی: مودی-شاہ کے خلاف کانگریس پہنچی سپریم کورٹ، کل ہوگی سماعت

کانگریس لیڈر سشمتا دیو نے لوک سبھا انتخابی مہم کے دوران مثالی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کے حوالہ سے وزیر اعظم نریندر مودی اور بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) صدر امت شاہ کے خلاف سپریم کورٹ میں پیر كو عرضی داخل کی۔ چیف جسٹس رنجن گوگوئی کی صدارت والی بنچ نے کہا کہ کانگریس لیڈر کی درخواست پر منگل کو سماعت کی جائے گی۔

درخواست میں کہا گیا ہے کہ آل انڈیا خواتین کانگریس صدر اور رکن پارلیمنٹ محترمہ دیو کی جانب سے مسٹر مودی اور مسٹر شاہ کے خلاف انتخابی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کی کئی بار شکایت کئے جانے کے باوجود الیکشن کمیشن کوئی قدم نہیں اٹھا رہا ہے. رکن پارلیمنٹ کی جانب سے عدالت میں موجود کانگریس لیڈر اور سینئر وکیل ابھیشیک منو سنگھوی نے کہا’’بی جے پی صدر اور وزیر اعظم نے اپنی تقریروں کے دوران کئی بار مثالی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کی ہے اور الیکشن کمیشن محترمہ دیو کی شکایت پر توجہ نہیں دے رہا ہے‘‘۔

بتا دیں کہ خبروں کے مطابق چیف جسٹس رنجن گگوئی کے سامنے اس عرضی کو پیش کیا گیا تھا۔ جس میں دیو نے شکایت کی ہے کہ الیکشن کمیشن کے ذریعے واضح پابندی کے باوجود مودی اور شاہ نے نفرت پھیلانے والی تقریریں کی، آرمڈ فورسز کا اپنی ریلیوں میں استعمال کیا۔ انہوں نے یہ بھی دعویٰ کیا کہ کانگریس کے پاس ان الزامات کے واضح ثبوت ہیں۔ درخواست میں کہا گیا ہے کہ مسٹر مودی نے تیسرے مرحلہ کی پولنگ کے دن 23 اپریل کو ایک روڈ شو کے دوران مثالی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کی تھی۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close