اپنا دیشتازہ ترین خبریں

سی بی آئی کے ڈائریکٹر کی تقرری پر سوال اٹھانے پرکھڑگے سے جیٹلی خفا

مرکزی وزیر ارون جیٹلی نے مرکزی جانچ ایجنسی (سی بی آئی) کے ڈائریکٹر کی تقرری کے سلسلے میں تقرری کرنے والی کمیٹی سے اختلاف رائے ظاہر کرنے کے اختیار کے مبینہ غلط استعمال پر لوک سبھا میں سب سے بڑی پارٹی کے اپوزیشن لیڈر ملک ارجن کھڑگے کو آڑے ہاتھوں لیا اور کہا کہ اختلاف رائے ظاہرکرنے کے حق کو ’سیاسی ہتھیار‘ کے طور پرنہیں استعمال کیا جانا چاہیے۔

بی جے پی کے قد آور رہنما مسٹر جیٹلی نے آج فیس بک پر پوسٹ بلاگ میں لکھا،’مسٹر کھڑگے سپریم کورٹ میں سی بی آئی کے سابق ڈائریکٹر آلوک ورما کی حمایت میں عرضی گزار کی حیثیت سے کھڑے تھے۔ انھیں تقرری سے متعلق کمیٹی سے الگ ہو جانا چاہیے تھا کیونکہ اس معاملے میں ان کا موقف واضح ہے۔ انہوں نے خود کو اس عمل سے الگ کیوں نہیں کیا‘؟

مسٹر جیٹلی نے لکھا ہے،’ اختلاف رائےظاہر کرنے کے حق کو کبھی بھی سیاسی ہتھیار کے طور پر استعمال نہیں کرنا چاہیے‘۔ انہوں نے اختلاف رائے ظاہر کرنے کے حق کو جمہوریت میں طاقتور ہتھیار قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس حق کا استعمال سوچ سمجھ کر کیا جانا چاہیے۔ مسٹر جیٹلی کا یہ تبصرہ ایسے میں آیا جب مسٹر کھڑگے نے سی بی آئی کے ڈائریکٹر کی تقرری پر سوال اٹھائے ہیں۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close