تازہ ترین خبریںدلی نامہ

سیلنگ معاملہ: منوج تیواری کی بڑھی مشکلیں، سپریم کورٹ نے ایک ہفتے میں مانگا جواب

سپریم کورٹ نے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جےپی) کے دہلی ریاست کے صدر منوج تیواری کو منگل کو سرزنش لگاتے ہوئے کہا کہ رکن پارلیمنٹ ہونے کا مطلب یہ نہیں ہے کہ وہ قانون اپنے ہاتھوں میں لے سکتے ہیں۔ جسٹس مدن بی لوکر اور جسٹس دیپک گپتا کی بینچ نے طنزیہ لہجے میں کہا،’’آپ نے ایسا بیان دیا ہے کہ 1000جائیداد ایسی ہیں جو سیل ہونی چاہئے،آپ فہرست دیں ہم آپ کو سیلنگ افسر بنا دیں گے۔‘‘

عدالت نے یہ بات اس وقت کہی جب مسٹر تیواری کی جانب سے پیش سینئر وکیل وکاس سنگھ نے کہا کہ دارالحکومت میں من چاہے طریقےسے سیلنگ کا کام ہورہا ہے،دہلی میں ہزاروں جگہوں پر غلط طریقےسے سیلنگ ہوئی ہے۔ عدالت نے کہا کہ مسٹر تیواری ایک ہفتے میں اس کی معلومات حلف نامے کے ذریعہ دیں۔

قابل ذکر ہے کہ مسٹر تیواری نے گزشتہ 16ستمبر کو شمال مشرقی دہلی کےہی گوکل پور گاؤں کے ایک مکان کی سیلنگ توڑی تھی۔اس کے بعد عدالت کی جانب سے تشکیل نگرانی کمیٹی نے عدالت کی توہین کا معاملہ دائر کیاہے۔ معاملے کی سماعت تین اکتوبر کو ہوگی۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close