اپنا دیشتازہ ترین خبریں

سپریم کورٹ کا بڑا فیصلہ، آر ٹی آئی کے دائرے میں آئے گا سی جے آئی کا دفتر

سپریم کورٹ نے بدھ کے روز ایک اہم فیصلے میں التزام دیا کہ چیف جسٹس آف انڈیا (سی جے آئی) کا دفتر آر ٹی آئی ایکٹ کے دائرے میں آتا ہے۔

چیف جسٹس رنجن گوگوئی، جسٹس سنجیو کھنہ، جسٹس دیپک گپتا، جسٹس ڈی وائی چندرچوڑ اور جسٹس این وی رمن کی آئینی بنچ نے یہ فیصلہ آئین کے آرٹیکل 124 کے تحت کیا۔ عدالت نے اپنے فیصلے میں کہا کہ آر ٹی آئی کے تحت احتساب سے شفافیت میں اضافہ ہوگا۔ اس سے عدالتی خودمختاری، شفافیت کو تقویت ملے گی۔ آئینی بنچ نے کہاکہ اس سے تقویت ملے گی کہ قانون سے بالاتر کوئی نہیں ہے۔ عدالت نے فیصلے میں کہاکہ چیف جسٹس آفس ایک عوامی اتھارٹی ہے۔ عدالت نے اپنے فیصلے میں کہا ہے کہ تمام جج آر ٹی آئی کے دائرہ کار میں آئیں گے۔

یاد رہے کہ سپریم کورٹ کے اس فیصلے کے بعد اب کالجیم کے فیصلوں کو سپریم کورٹ کی ویب سائٹ پر ڈال دیا جائے گا۔ فیصلے کو پڑھتے ہوئے جسٹس رمنا نے کہا کہ آر ٹی آئی کو جاسوسی کے ذرائع کے طور پر استعمال نہیں کیا جا سکتا۔ سپریم کورٹ کی آئینی بنچ نے یہ فیصلہ دہلی ہائی کورٹ کے فیصلے کو چیلنج کرنے والی درخواست پر سنایا ہے۔ اس سال اپریل ماہ میں سپریم کورٹ نے اس معاملے میں اپنا حکم محفوظ رکھا تھا۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close