اپنا دیشتازہ ترین خبریں

سب سے کم وقت تک وزیر اعلی رہنے کا دلچسپ ریکارڈ

مہاراشٹرا میں گذشتہ 20 دن سے چل رہے سیاسی اتھل پتھل کے بعد بی جے پی کے دویندر فڑنویس کو بھلے ہی تین دن میں استعفی دینا پڑا ہو لیکن سب سے کم وقت تک وزیر اعلی رہنے کا ریکارڈ ابھی بھی اترپردیش کے جگدمبکا پال کے نام ہے جو اس وقت بی جے پی کے رکن پارلیمان ہیں۔

یاد رہے کہ اترپردیش کے اس وقت کے گورنر رومیش بھنڈاری نے کلیان سنگھ کہ سرکاری کو برخواست کردیا تھا اور ڈیموکریٹکس پارٹی کے جگدمبکا پال کو 21 فروری 1998 میں حلف دلا دیا تھا لیکن وہ صرف 44 گھنٹے ہی وزیر اعلی رہ سکے تھے۔ الہ آباد ہائی کورٹ نے جگدمبکا پال کے وزیر اعلی کے طور پر حلف لینے کے پورے عمل کو ہی خارج کردیا تھا۔ اس وقت یو پی اسمبلی تشدد کا بھی گواہ بنی تھی جب اراکین اسمبلی نے ایک دوسرے پر ایوان میں ہی بنچ پر لگے مائیک کو اکھاڑ کر حملہ کردیا تھا۔ اس میں کئی اراکین اسمبلی کو چوٹیں بھی آئی تھیں اور کچھ صحافی بھی زخمی ہوئے تھے۔

اسمبلی میں 24 فروری کو فلور ٹیسٹ ہوا جس میں اسمبلی اسپیکر کیشری ناتھ ترپاٹھی نے اپنی ایک جانب جگدمبکا پال کو اور دوسری جانب کلیان سنگھ کو بٹھایا تھا۔ اراکین اسمبلی کی حمایت کلیان سنگھ کو حاصل تھی اس لئے انہوں نے اسمبلی میں اکثریت ثابت کر دیا۔ جگدمبکا پال کو ہٹانے کے ہائی کورٹ کے فیصلے کے بعد ہائی اولٹج ڈراما ہوا۔ جگدمبکا پال نے لکھنؤ کے پانچویں منزل پر وزیر اعلی کی کرسی سے ہٹنے سے انکار کردیا تو پولیس کو کاروائی کرنی پڑی۔ پانچویں منزل کی بجلی کاٹی گئی اندھیرا ہوجانے کے بعد ہی جگدمبکا پال کرسی سے ہٹے۔

دلچسپ ہے کہ شری پال اب ڈومریا گنج پالیمان حلقے سے بی جے پی کے رکن پارلیمان ہیں۔ کرناٹک کے بی ایس یدی رپا نے سال 2018 میں ہوئے اسمبلی انتخاب کے بعد وزیر اعلی کی کرسی سنبھالی، گورنر نے انہیں سب سے بڑی پارٹی کے لیڈر کے طور پر وزیر اعلی کا حلف دلایا لیکن وہ اسمبلی میں اکثریت ثابت کرنے سے پہلے ہی استعفی دے دیا تھا کیونکہ ان کے پاس اراکین کی مطلوبہ تعداد نہیں تھی۔ اس وقت یدی رپا کا وزیر اعلی کی حیثیت سے میعاد کار 17 سے 19 مئی 2018 تک محض 55 کھنٹوں کا رہا تھا۔ اسی طرح سے بہار کے موجود وزیر اعلی نتیش کمار سال 2000 میں تین دن کے لئے وزیر اعلی بنے اور اکثریت نہ ثابت کر پانے کی وجہ سے انکی کرسی چلی گئی۔

انڈین نیشنل لوک دل کے اوم پرکاش چوٹالہ 1990 میں 5 دنوں اور 1991 میں چار دنوں کے لئے وزیر اعلی بنے تھے۔ ادھر مہاراشٹرا میں بی جے پی کے دویندر فڑنویس نے 23 نومبر کی صبح مہاراشٹرا کے وزیر اعلی کی حیثیت سے حلف لیا اور 26 نومبر کو وزیر اعلی کے عہدے سے استعفی دے دیا۔ فڑنویس کو این سی پی کے اجیت پوار کی حمایت حاصل تھی اور اسی بنیاد پر انہوں نے وزیر اعلی کا حلف لیا تھا لیکن تین دنوں میں ہی اجیت پوار نے حمایت سے انکار کردیا اور فڑنویس وقت کی نزاکت کو پھانپتے ہوئے اسمبلی میں فلور ٹیسٹ سے قبل ہی استعفی دے دیا۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close