آئینۂ عالمتازہ ترین خبریں

سابق اسرائیلی وزیر کو جاسوسی کے الزام میں 11برسوں کی سزا

اسرائیل کی ایک عدالت نے سابق وزیر گونین سیگوو کو ایران کے لئے برسوں تک جاسوسی کرنے کے معاملے میں قصوروار قرار پائے جانے پر منگل کو 11برسوں کی قید کی سزا سنائی۔

موصول اطلاعات کے مطابق یروشلم ضلع عدالت نے مسٹر گونین سیگوو کی سزا کو منظوری دے دی۔ دراصل اسٹیٹ ٹریبونل کے سامنے مسٹر سیگوو نے جنوری میں قبول کیا تھا کہ انہوں نے جاسوسی کی ہے اور دشمن کو کافی اطلاعات فراہم کی ہیں۔ ٹریبونل کی یروشلم شاخ نے عدالت کے فیصلے کے بعد ایک بیان جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے مسٹر سیگوو نے خود قبول کیا تھا کہ وہ پانچ برسوں تک ایرانی خفیہ ایجنسیوں کے رابطہ میں رہے اور اس دوران انہوں نے کافی خفیہ جانکاریاں بہم پہنچائیں تھیں اور وہ دنیا کے متعدد لیڈروں سے ملے تھے۔

گزشتہ برس سیگوو کو گویانا سے حوالگی پر اسرائیل لایا گیا تھا جہاں اسے گرفتار کیا گیا تھا۔ وہ دائیں بازو کی پارٹی جومیٹ کے ممبر پارلیمنٹ بھی تھے اور ایک مرتبہ توانائی اور ڈھانچہ جاتی معاملوں کے وزیر کے عہدے پر بھی فائز تھے۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close