اپنا دیشتازہ ترین خبریں

راہل گاندھی وزیراعظم کی ماں پر تبصرہ کرنے والے راج ببر پر کارروائی کریں :بی جے پی

بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) نے کانگریس کے سینئر لیڈر راج ببر کے ذریعہ وزیر اعظم نریندر مودی کی بزرگ ماں هيرا بین پر قابل اعتراض تبصرہ کرنے کی آج سخت مذمت کرتے ہوئے کانگریس صدر راہل گاندھی سے مطالبہ کیا کہ وہ مسٹر ببر کے خلاف کارروائی کریں۔

بی جے پی کے ترجمان ڈاکٹر سمبت پاترا اور مسٹر جی وی ایل نرسمہا راؤ نے یہاں ایک پریس کانفرنس میں کہا، "مسٹر ببر نے وزیر اعظم کی ماں کے سلسلے میں قابل اعتراض تبصرہ کیا ہے۔اس سے پہلے مسٹر ببر نوٹ بندی کے وقت بھی مسٹر مودی کی ماں کے خلاف تبصرہ کر چکے ہیں۔ لہذا مسٹر گاندھی ان کے خلاف سخت کارروائی کریں۔”انہوں نے مسٹر ببر کے ذریعہ بی جے پی پر رام کا کٹورا لے کر ووٹ مانگنے سے متعلق بیان پر بھی حملہ کیا اور کہا کہ کانگریس کے لیڈر بھگوان رام کی توہین کرتے ہیں اور نکسلیوں کی ستائش کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس الیکشن ہار رہی ہے اور ہر مرتبہ انتخاب ہارتا دیکھ کر کانگریس لیڈر وزیر اعظم پر قابل اعتراض بیان بازی کے ساتھ ذاتیات پر بھی حملہ کرنے لگتے ہیں۔ کانگریس کے لیڈروں نے ان کے لئے نیچ، بچھو چپل وغیرہ جیسے قابل اعتراض الفاظ استعمال کئے ہیں ۔

ڈاکٹر پاترا نے کانگریس کے رہنما سی پی جوشی اور پنجاب حکومت میں وزیر نوجوت سنگھ سدھو کے بیانات کی بھی مذمت کی اور مسٹر گاندھی سے انہیں پارٹی سے فوراً برطرف کرنے کا مطالبہ کیا۔مسٹر جوشی کے ذریعہ مرکزی وزیر اوما بھارتی کے خلاف کئے گئے نسل پرستانہ تبصرہ پر سخت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے انهوں نے الزام لگایا کہ کانگریس نے الیکشن سے پہلے معاشرے کو مذہب اور ذات کی بنیاد پر بانٹنے کا کام کیا ہے۔ کرناٹک میں بھی لِنگایت کو ہندوؤں سے الگ کرنے کی چال چلی تھی۔ بعد میں وہ افسوس کر رہے ہیں۔

مسٹر سدھو کے ذریعہ گرو پرو کے موقع پر پاکستان کی تعریف کئے جانے پر طنز کرتے ہوئے ترجمان نے کہا کہ وہ صبح اٹھ کر پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان اور آرمی چیف قمر جاوید باجوہ کا نام جپتے ہیں۔وہ کہتے ہیں کہ انہیں دو دن میں پاکستان میں اتنی محبت ملی جتنی ہندوستان میں پوری زندگی میں نہیں ملی تھی۔ ڈاکٹر پاترا نے کہا کہ مسٹر سدھو کو پنجاب حکومت اور کانگریس سے فوراً آزاد کرنا چاہئے تاکہ وہ پاکستان میں عمران خان حکومت میں شامل ہوجائیں۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close