اپنا دیشتازہ ترین خبریں

رام مادھو اپنے الزامات ثابت کریں یا پھر معافی مانگیں: عمر عبداللہ

نیشنل کانفرنس کے نائب صدر اور سابق وزیراعلیٰ عمرعبداللہ نے بی جے پی کے قومی جنرل سکریٹری رام مادھو سے کہا ہے کہ وہ ‘پاکستان کے اشاروں پرحکومت تشکیل دینے’ کے اپنے الزامات ثابت کرے یا پھر معافی مانگے۔ انہوں نے کہا کہ مسٹر مادھو نے ریاست میں اپنی پسند کی ایک حکومت کا خواب دیکھا تھا جو پورا نہیں ہوا۔

عمر عبداللہ نے جمعرات کو یہاں ایک نیوز کانفرنس کے دوران رام مادھو کے الزامات پر کہا کہ ‘این سی اور پی ڈی پی کو پاکستان سے تازہ ہدایات ملی تھیں کہ وہ ایک ہوکر حکومت تشکیل دیں’ پر شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ‘بڑی بدقسمتی کی بات ہے کہ بی جے پی کے ایک سینئر لیڈر نے ہماری جماعتوں پر انگلی اٹھائی ہے اور کہا ہے کہ یہ پاکستان کے اشاروں پر کیا گیا ہے۔ میں رام مادھو صاحب اور ان کے ساتھیوں جنہوں نے یہ باتیں کی ہیں، کو چیلنج کرتا ہوں کہ وہ ثبوت لیکر لوگوں کے سامنے آئیں۔ اور دکھائیں کہ کہاں ہم پاکستان کے اشاروں پر چلتے ہیں۔ آپ میرے ان تین ہزار ساتھیوں کی قربانیوں کو نظرانداز کررہے ہیں جنہوں نے پاکستان کے اشاروں پر ناچنے سے انکار کیا۔ گذشتہ تیس برسوں کے دوران ہمارے جتنے ورکر مارے گئے ہیں، آپ کی جماعت کے اتنے ورکر آج تک جاں بحق نہیں ہوئے ہوں گے’۔

انہوں نے کہا ‘آپ (رام مادھو) ہم سے کہتے ہیں کہ آپ نے کیا قربانیاں دی ہیں؟ اس ملک کے لئے ہم نے کیا کیا، وہ ہم جانتے ہیں۔ اس ملک کی خاطر ہم نے کیا قربانیاں دیں وہ میرے ورکر جانتے ہیں۔ وہ اس ورکر کا بیٹا اور بیٹی جانتا ہے۔ ان کے آنسو آج تک پونچھے نہیں گئے۔ آپ ہم سے کہتے ہو کہ ہم پاکستان کے اشاروں پر ناچتے ہیں۔ اگر آپ کے پاس ہمت ہے تو ثبوت لیکرعوام کی عدالت میں آجائیں۔ ہم بھی دیکھتے ہیں کہ آپ کہاں کھڑے ہیں’۔ انہوں نے کہا ‘آپ یہ بزدلی کی سیاست مت کریے۔ ہم نے آپ جیسے بہت لوگوں کو دیکھا ہے۔ آپ آتے ہو ، الزامات لگاتے ہو اور پتلی گلی سے کھسک جاتے ہو۔ ہمت ہے تو ثبوت لیکر آﺅ۔ نہیں تو معافی مانگئے۔ لوگ دیکھیں گے آپ میں کتنا دم ہے’۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close