اپنا دیشتازہ ترین خبریں

رافیل معاملہ: بی جے پی ورکروں کا مظاہرہ، راہل گاندھی سے معافی کا مطالبہ

رافیل اور راہل گاندھی کے بیان پرسپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد سابق کانگریس صدر راہل گاندھی سے معافی کے مطالبے پر ملک گیر سطح پر احتجاج کر رہے بی جے پی ورکروں نے آج کلکتہ میں کانگریس ہیڈکوارٹر بدھان بھون کے باہر شدید مظاہرہ کر رہے ہیں حالانکہ راہل گاندھی کی تصویر اور ہنگامہ آرائی پر بنگال کانگریس نے شدید مذمت کی ہے۔

جس پر ریاستی کانگریس کے صدر سومن مترا نے کہا کہ یہ سیاست نہیں بلکہ شرپسندانہ عمل ہے۔ خیال رہے کہ سپریم کورٹ نے رافیل کی جانچ سے متعلق تمام عرضیوں کو خارج کرتے ہوئے کہا تھاکہ چوں کہ اس معاملے میں غیر ملکی کمپنی بھی شامل ہے اس لیے اس پر جانچ نہیں ہوسکی ہے۔ تاہم جسٹس کے ایم جوزف نے اس پر الگ موقف پیش کرتے ہوئے کہا تھاکہ اگر جانچ ایجنسی محسوس کرتی ہے تو جانچ کیا جاسکتا ہے۔

دوسری طرف اترپردیش کے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے بھی سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد رافیل معاملے میں راہل گاندھی پرجھوٹ بولنے کا الزام لگاتے ہوئے معافی کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے صحافیوں سے کہاکہ رافیل جنگی طیارہ خرید معاملے میں کانگریس لیڈر راہل گاندھی نے ایک کمپنی کو فائدہ پہنچانے کا الزام لگاتے ہوئے لگاتار جھوٹ بولا اور ملک کی عوام کو گمراہ کرنے کی کوشش کی۔ انہوں نے اپنے جھوٹ میں اس ملک کے وزیر اعظم کا بھی ذکر کردیا جہاں سے طیارہ خرید گیا ہے۔

انہوں نے سوال اٹھایا کہ اس طرح پورے ملک سے جھوٹ بولنے والا شخص کیا عوامی نمائندہ ہونے کے لائق ہے۔ انہوں نے کہا کہ اپنے جھوٹ کے لئے راہل گاندھی کو پورے ملک سے معافی مانگنی چاہئے۔

تاہم راہل گاندھی نے ٹوئیٹ کرتے ہوئے کہا تھا کہ رافیل پر فیصلہ جانچ کے نئے دروازے کھل سکتے ہیں انہوں نے اس کی جانچ پارلیمنٹ کی مشترکہ کمیٹی سے کرانے کا بھی مطالبہ کیا تھا۔ تاہم بی جے پی نے کہا تھاکہ رافیل پر سپریم کورٹ کا فیصلہ آنے کے بعد راہل گاندھی اور کانگریس کو ملک سے معافی مانگنی چاہیے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close