تازہ ترین خبریںدلی نامہ

دہلی میں ہوا کا معیار بد سے بدتر، آڈ-ایون میں توسیع کا امکان

دار الحکومت نئی دہلی میں بدھ کے روز آلودگی کے سبب ہوا کا معیار بے حد خراب رہا۔ دوپہر ایک بجے ہوا کا معیار انڈیکس 542 درج کیا گیا۔ سینٹرل پولیوشن کنٹرول بورڈ نے یہ اطلاع دی ہے۔

اس صورتحال کے پیش نظر وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال نے کہا ہے کہ حکومت صورتحال کی سنگینی کو دیکھتے ہوئے آڈ۔ایون منصوبے کی مدت میں توسیع کر سکتی ہے۔ دہلی میں ہوا کے معیار پر اس وقت 35 اسٹیشنوں سے نگرانی کی جارہی ہے اور انہی سے حاصل معلومات کی بنیاد پر پولیوشن کنٹرول بورڈ نے یہ اوسط اعداد و شمار جاری کیے ہیں۔ دوارکا، بوانا، آنند وِہار اور وزیر پور قومی راجددھانی میں سب سے زیادہ آلود رہے اور ان مقامات پر ہواکے معیار انڈیکس 440 سے اوپر رہا۔

پڑوسی ریاستوں میں فصل کے باقیات (پرالی) جلائے جانے میں گذشتہ کئی دنوں سے کوئی کمی نہیں آئی ہے۔ اسی باعث غازی آباد، نوئیڈا، گریٹر نوئیڈا، گروگرام(گڑگاؤں)، فریدآباد اور دیگر سرحدی حصوں میں ہوا کا معیار انڈیکس 440 سے اوپر رہا ہے۔ گذشتہ کچھ دنوں میں کم از کم درجہ حرارت میں کافی کمی آئی ہے اور اس کی وجہ سے آلودگی کے ذرات ہوا میں معلق ہیں۔

علاوہ ازیں تیز ہواؤں کے چلنے سے بھی یہ ذرات ماحولیات میں نچلی سطح پر موجود ہیں جس کے سبب آلودگی کی صورتحال مزید بد تر ہوئی ہے۔ محکمہ موسمیات کے مطابق صبح ساڑھے آٹھ بجے ہوا میں نمی کی سطح 87 فیصد تھی اور صبح آسمان میں کافی کہرا چھایا رہا۔ اسی سبب عوام کو سانس لینے میں کافی دقت ہوئی اور زیادہ تر افراد ماسک لگائے ہوئے نظر آئے۔

دہلی حکومت کے ذرائع کا کہنا ہے کہ‘گرو تیوہار’کے پیش نظر گذشتہ دو دنوں سے آڈ۔ایون میں رخصت دی گئی تھی لیکن بدھ کے روز اسے دوبارہ شروع کیا جا سکتا ہے جس کے جمعہ تک جاری رہنے کے قوی امکانات ہیں۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close