تازہ ترین خبریںدلی نامہ

دہلی حکومت کے تحت تمام غیر ضروری دفاتر اور خدمات 31 مارچ تک بند

وزیر اعلی کی تمام اسپتالوں کے ایم ایس اور تمام محکموں کے سربرہان سے ملاقات میں ہدایات *وسائل، دوائیں، ٹیسٹنگ مشینیں، وینٹیلیٹر اور عملہ کی نہ ہو کمی ٭کورونا وائرس سے نمٹنے کو اسپتال رہیں تیار ٭ضروری خدمات کے زمرے کے 55 سال سے اوپر کے ملازم گھر سے کریں کام

نئی دہلی(انور حسین جعفری)
دہلی کے وزیر اعلی اروند کجریوال نے کورونا وائرس سے نمٹنے کے لئے دہلی سیکرٹریٹ میں تمام محکموں کے سربراہوں اور اسپتالوں کے ایم ایس کے ساتھ میٹنگ کی۔ افسران سے میٹنگ کے دوران دہلی حکومت کی غیر ضروری خدمات کو 31 مارچ تک بند رکھنے کا فیصلہ کیا گیا۔ غیر ضروری خدمات کے تمام ملازمین کو گھر سے کام کرنے کی اجازت بھی دی گئی ہے۔ وزیراعلی نے 55 سال سے زیادہ عمر کے ملازمین کو بھی ضروری خدمات میں گھر سے کام کی چھوٹ دی ہے۔ تاہم محکمہ کے سربراہ کو یہ استثنیٰ دینے کا حق حاصل ہوگا۔ محکمہ کے سربراہ فیصلہ کریں گے کہ 55 سال سے زیادہ عمر کے ملازمین گھروں سے ضروری خدمات میں کام کر سکتے ہیں۔

وزیر اعلی اروند کجریوال نے تمام محکموں کے سربراہوں کو ہفتہ کی صبح تک گھر سے کام کرنے والے ملازمین کی فہرست تیار کرنے کی ہدایت کی ہے۔ اجلاس کے دوران یہ بھی طے کیا گیا کہ گھر سے کام کے دوران کوئی ٹھیکیدار ملازم کی تنخواہ نہیں کاٹے گا۔ وزیر اعلی نے کہاکہ کرونا کو روکنے میں ہمارے اپنے ملازمین اور لوگوں کے تعاون کی اشد ضرورت ہے۔ عوامی ڈیلنگ کو ضروری اور غیر ضروری زمرے میں تقسیم کریں۔ اس کے محکمہ کے اندر موجود اکاؤنٹس، نگرانی اور ذاتی شعبہ کی سرگرمیوں کے بارے میں نہیں کہا جا رہا ہے، بلکہ عوامی معاملات کی وہ سرگرمیاں جن میں ہم عوام کی خدمت کرتے ہیں۔ کجریوال نے کہا کہ ضروری اور غیر ضروری سرگرمیوں کے علاوہ تمام محکموں کے تمام افسران اور ملازمین کی ایک فہرست بنائی جائے، جن کو کام پر آنے کی ضرورت نہیں ہے۔ محکمہ میں موجود تمام غیر ضروری ملازمین کو احکامات جاری کیے جائیں کہ وہ صرف اپنے گھر پر رہ کر کام کریں۔

وزیر اعلی نے اس کے علاوہ دہلی سکریریٹ میں منعقدہ میٹنگ میں تمام اسپتالوں کے ایم ایس سے ملاقات کے دوران تمام سرکاری اسپتالوں کو ہدایت دی ہے کہ وہ کورونا کی وجہ سے ہونے والی ممکنہ ہر ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لئے تیار رہیں۔ انہوں نے تمام اسپتالوں کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ کو ہدایت کی ہے کہ اسپتال میں وسائل اور عملے کی کمی نہیں ہے۔ ساتھ ہی تمام میڈیکل سپرنٹنڈنٹس کو اختیار دیا گیا ہے کہ وہ تین ماہ کے لئے معاہدے پر اضافی عملہ مقرر کریں۔ انہوں نے کورونا سے نمٹنے کے لئے فوری طور پر تمام ضروری اشیاء خریدنے کو کہا ہے۔ اسی کے ساتھ ہی انہوں نے تمام افسران کو ہدایت دی کہ وہ کورونا سے نمٹنے کے لئے ضروری وسائل، دوائیں اور دیگر سہولیات اسپتالوں میں لے جانے کے لئے ضروری کاغذی کارروائی فوری کریں تاکہ سامان میں کسی بھی طرح کی خریداری پریشانی نہ ہو۔ اس دوران وزیر صحت ستندر جین اور اعلی عہدیدار بھی موجود تھے۔

وزیر اعلی نے کہا کہ دہلی میں گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کچھ مثبت معاملات سامنے آئے ہیں۔ اگرچہ ابھی تک دہلی میں کورونا وائرس کا زور نہیں ہے، لیکن دہلی کے اسپتالوں کو ہر صورتحال سے نمٹنے کیلئے پہلے سے تیار رہنا ہوگا۔ وزیر اعلی اروند کجریوال نے تمام میڈیکل سپرنٹنڈنٹس کو اسپتال کی تیاری مکمل کرنے کی ہدایت کی ہے۔ نیز یہ بھی یقینی بنائیں کہ اسپتال میں کسی ضروری وسائل کی کمی نہ ہو۔ اگر کسی اسپتال کو کسی وسائل کیلئے کسی منظوری کی ضرورت ہو تو اسے فورا ًلے کر آئیں، وزارت سمیت افسران سے اسے فوری منظوری ملے گی۔ ہاتھوں ہاتھ فائل کی منظوری دی جائے گی۔ انہوں نے تمام میڈیکل سپرنٹنڈنٹس کو ہدایت کی کہ وہ اس بات کو یقینی بنائیں کہ ان کے اسپتال میں تمام ٹیسٹنگ مشینیں کام کریں۔ وزیر اعلی نے کہا کہ وینٹیلیٹروں کو تمام اسپتالوں میں کام کرنا چاہئے۔

وزیر اعلی اروند کجریوال نے یہ بھی توجہ دلائی کہ اس بات کو بھی دھیان میں رکھا جائے کہ کورونا کوئی مریض اسپتال سے ٹھیک ہونے سے پہلے نہیں بھاگے۔ انہوں نے کہا کہ پولیس تعاون کرنے کے لئے تیار ہے۔ انہوں نے تمام 6 اسپتالوں میں سیکیورٹی بڑھانے کی بھی ہدایت کی۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close