تازہ ترین خبریںدلی نامہ

دہلی حج کمیٹی کے ذریعہ اس سال دوبارہ حج خدمات پر نہیں جا سکیں گے خادم الحجاج

دہلی اسٹیٹ حج کمیٹی کی اہم میٹنگ میں کیا گیا فیصلہ، پہلی مرتبہ جانے والے خادم الحجاج کو دیا جائےگا موقع

نئی دہلی (انور حسین جعفری)
دہلی اسٹیٹ حج کمیٹی کے ذریعہ حاجیوں کی خدمات کےلئے پہلے سعودی عرب جا چکے خادم الحجاج اس برس دوبارہ حج خدمات کےلئے نہیں جا سکیں گے، بلکہ وہ لوگ جائیں گے جو اہل ہوتے ہوئے بھی دہلی حج کمیٹی کی جانب سے حج خدمات کےلئے روانہ نہیں ہو سکے ہیں۔ یہ اہم فیصلہ دہلی اسٹیٹ حج کمیٹی کے چیئر مین حاجی اشراق خان کی صدارت میں خادم الحجاج کی در خواستوں کی منظوری کےلئے دہلی اسٹیٹ حج کمیٹی میں منعقدہ میٹنگ میں اتفاق رائے سے کیا گیا۔ میٹنگ میں حج کمیٹی آف انڈیا کے رکن اور دہلی امبارکیشن پوائنٹ کے انچارج عرفان احمد، حج کمیٹی آف انڈیا کے لائزن آفیسر سلطان احمد، دہلی حج کمیٹی کے ارکان نصرو الدین سیفی، سیما طاہرہ اور دہلی حج کمیٹی کے ایگزیکٹو آ فیسر ڈاکٹر اشفاق احمد عارفی موجود تھے۔

اس سال دہلی اسٹیٹ حج کمیٹی سے منتخب 10خادم الحجاج میں خواتین کے زمرے میں خاتون ٹیچرخورشید بیگم، ریزرو کوٹے میں دہلی حج کمیٹی سے وجیہ الدین، دہلی وقف بورڈ سے محمد یونس، اور سین کوٹے میں دہلی حج کمیٹی کے ایگزیکٹو آ فیسر ڈاکٹر اشفاق احمد عارفی، دیگر خادم الحجاج میں جامعہ ملیہ اسلامیہ سے لیب اسسٹنٹ خورشید انور، جامعہ پرسنل اسسٹنٹ محفوظ احمد، انڈین ریلوے سے چیف یارڈ ماسٹر رفیق الدین، اردو ٹی جی ٹی ٹیچر ناصر حسین، دہلی اردو اکادمی سے امیر علی اور دہلی پولیس سے اے ایس آئی یونس خان کا انتخاب کیا گیا ہے۔ اس سال خادم الحجاج کےلئے 24 درخواستیں موصول ہوئی تھیں، جس میں 10افراد کو منتخب کر لیا گیا ہے، ان کی فہرست تیار کرکے حج کمیٹی آف انڈیا کو منظوری کےلئے بھیج دی گئی ہے۔ جو حج کمیٹی آف انڈیا کی سلیکشن کمیٹی سے منظور کی جائےگی۔

ذرائع کی اطلاع کے مطابق دہلی حج کمیٹی کی اس اہم میٹنگ میں ارکان کی جانب سے یہ اعتراض کیا گیا تھا کہ ہر سال کچھ چنندہ لوگ ہی خادم الحجاج بن کر جتے ہیں، جس کے چلتے دوسرے اہل لوگوں کو موقع نہیں مل پاتا۔ اس لئے اس سال ان نئے لوگوں کو جو دہلی اسٹیٹ حج کمیٹی کے ذریعہ حج خدمات پر نہیں گئے اور تمام شرائط پر پورے اترتے ہوئے خادم الحجاج کےلئے اہل ہیں ان درخواست گذاروں کو حج خدمات پر بھیجا جائے۔

اس فیصلے کے سلسلے میں دہلی اسٹیٹ حج کمیٹی کے چیئر مین حاجی اشراق خان نے بتایا کہ دہلی اسٹیٹ حج کمیٹی کے ذریعہ پہلے حج خدمات پر گئے ہوئے خادم الحجاج کو دوبارہ حج خدمات پر نہیں بھیجا جائے گا۔ اس مرتبہ خادم الحجاج کےلئے شرائط کو پورا کرنے والے نئے لوگوں کو موقع دیا گیا ہے۔ جس کو اتفاق رائے سے منظور کر لیا گیا ہے اور ان کی فہرست حج کمیٹی آف انڈیا کو بھیج دی گئی ہے۔ اگر کوئی تکنیکی اڑچن کی وجہ سے تبدیلی نہ کرنی پڑی تو دہلی حج کمیٹی سے منظور فہرست کے افراد ہی خادم الحجاج کےلئے سعودی عرب روانہ ہوں گے۔

حاجی اشراق خان نے بتایا کہ خادم الحجاج کےلئے 200عازمین حج پر ایک خادم الحجاج جاتا ہے، چونکہ دہلی اسٹیٹ حج کمیٹی سے اس برس 2010 عازمین قرعہ میں منتخب ہوئے ہیں اس لئے دہلی حج کمیٹی سے 10خادم الحجاج سعودی عرب حج خدمت کےلئے جائیں گے۔ اگر دوسری اسٹیٹ سے بچی ہوئی سیٹیں ملنے پر دہلی کے عازمین کی تعداد 2200 یا اس سے زیادہ تک چلی جاتی ہے تو ویٹنگ میں موجود درخواست دہندگان میں سے خادم الحجاج کےلئے بھیجا جائے گا۔ ویٹنگ میں دو افراد دہلی حج کمیٹی کے ملازم شریف احمد اور دہلی پولیس کے اہلکار اے ایس آئی اسعد رضا ہیں۔ منتخب خادم الحجاج کو سلیکشن کمیٹی کی منظوری ملنے کے بعد ان کی حج کمیٹی آف انڈیا میں ٹریننگ ہوگی۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close