اپنا دیشتازہ ترین خبریں

حلیف پارٹیاں اگر چاہیں گی تو وزیراعظم بننےکے لئے تیار ہوں: راہل گاندھی

کانگریس صدر راہل گاندھی نے الزام لگایا ہے کہ بھارتیہ جنتا پارٹی ملک کی 1.3ارب آبادی پر ایک ’گھٹن بھری آڈیالوجی‘ تھوپنا چاہتی ہے اس لئے اپوزیشن جماعتوں نے اسے اقتدار سے باہر کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور وہ خود ملک کا وزیر اعظم بننے کے لئے تیار ہیں۔

مسٹر گاندھی نے جمعہ کو یہاں سولہویں ہندوستان ٹائمس لیڈرشپ سمٹ میں اہم صنعت کاروں، سفارت کاروں، سیاست دانوں اورمختلف شعبوں کے ماہرین سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اتحاد کی حلیف جماعتیں انہیں وزیر اعظم بنانا چاہئیں گی تو وہ یہ ذمہ داری اٹھانے کے لئے تیار ہیں۔ کانفرنس کے دوران سوال جواب کے سیشن میں ان سے پوچھا گیا تھا کہ کانگریس اقتدارمیں آتی ہے تو کیا وہ وزیر اعظم بنیں گے ، مسٹر گاندھی نے کہا کہ اتحاد کی حلیف جماعتیں اگر یہ ذمہ داری سونپیں گی تو وہ ذمہ داری سنبھالنے کے لئے تیار ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن جماعتوں نے2019کے لوک سبھا الیکشن میں پہلے متحد ہوکر بی جے پی کو شکست دینے کا فیصلہ کیا ہے اور اس کے بعد ہی وزیر اعظم کے عہدہ کے بارے میں غور کیا جائے گا۔

کانگریس صدر نے اس دوران بی جے پی حکومت پر سخت حملے کئے اور الزام لگایا کہ وہ ملک کی 1.3 ارب کی آبادی پر ’گھٹن بھری آڈیالوجی‘ تھوپ رہی ہے ۔ اقتدار کے نشے میں چور ان لوگوں کا دعوی ہے کہ علم پر ان کی ہی اجارہ داری ہے ۔ وہ لوگوں کی بات سننے کو بالکل تیار نہیں ہیں۔

ٹیگز
اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close