تازہ ترین خبریںدلی این سی آر

حج سہولتیں بڑھانے کے وزارت حج کے اعلانات سے حج سیوا سمیتی کا اختلاف

نئی دہلی (انور حسین جعفری)
آل انڈیا حج سیوا سمیتی نے دعویٰ کیا ہے کہ اس سال صرف ایک لاکھ 40 ہزار عازمین ہی سعادت حج ادا کر پائیں گے جبکہ دولاکھ 75 ہزار حج درخواستیں آئی ہیں۔ حج سیوا سمیتی کے صدر حافظ نوشاد اعظمی نے یہ الزام بھی لگایا کہ 2018 کا سفر حج سب سے مہنگا تھا اور نئی حج پالیسی سے صرف ٹور آپریٹروں کو فائدہ پہنچا ہے۔

حج کمیٹی آف انڈیا کے ذریعہ سفر حج کرنے والے حاجیوں کی حدمات انجام دینے والی تنظیم کے صدر حافظ نوشاد احمد اعظمی نے استدلال کیا کہ پچھلے پانچ برسوں میں مرکزی حج کمیٹی کے کوٹے میں صرف پندرہ ہزار کا اضافہ ہوا ہے۔ انہوں نے حج سہولتیں بڑھانے کے مرکزی وزارت حج کے اعلانات سے اختلاف کرتے ہوئے الزام لگایا کہ پچھلے پانچ برسوں میں مرکزی حج کمیٹی کے توسط سے جانے والے حاجیوں کی صرف مشکلات ہی بڑھی ہیں جنہیں 2022 تک ملنے والی حج سبسڈی کو 2017 میں ہی ختم کردیا گیا تھا۔ اس کے باوجود حاجیوں کو کرائے اور سفری اخراجات کے رخ پر کوئی سہولت مبینہ طور پر نہیں دی گئی جو گلوبل ٹنڈر کی صورت میں عین ممکن تھی۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close