اپنا دیشتازہ ترین خبریں

جی ایس ٹی: بڑھ رہی ہے رٹرن فائل نہ کرنے والوں کی تعداد

گڈز اینڈ سروس ٹیکس (جی ایس ٹی) میں رجسٹرڈ ٹیکس دہندگان کی تعداد تو بڑھ رہی ہے، لیکن ساتھ ہی رٹرن نہیں فائل کرنے والے ٹیکس دہندگان کی تعداد میں بھی اضافہ ہوا ہے۔

گزشتہ سال یکم جولائی سے ملک بھر میں ان ڈائرکٹ ٹیکس کا نیا نظام یعنی جی ایس ٹی کا نفاذ عمل میں آیا تھا۔ اس وقت رجسٹرڈ ٹیکس دہندگان کی تعداد 74،61،214 تھی۔ ذرائع نے بتایا کہ اب تک 87.02 فیصد افرادنے جولائی 2017 کے لئے رٹرن داخل کیا ہے. وہیں، اس سال جولائی میں رجسٹرڈ ٹیکس دہندگان کی تعداد بڑھ کر 94،70،282 ہو گئی ہے، لیکن ان میں سے 73.15 فیصد نے ہی رٹرن داخل کیا ہے۔

جی ایس ٹی کے تحت ڈیڑھ کروڑ روپے تک کا سالانہ کاروبار کرنے والے ٹیکس دہندگان کو اب سہ ماہی رٹرن بھرنا ہوتا ہے جس کی آخری تاریخ سہ ماہی ختم ہونے کے بعد ایک ماہ تک ہوتی ہے۔ وہیں ڈیڑھ کروڑ روپے سے زیادہ کا کاروبار کرنے والوں کو ہر ماہ رٹرن داخل کرنا ہوتا ہے اور اس کے لئے انہیں 20 دن کا وقت ملتا ہے۔
آخری تاریخ کے بعد رٹرن فائل کرنے پر جرمانہ دینا ہوتا ہے. حالانکہ جی ایس ٹی کونسل وقتاً فوقتاً مختلف اسباب کی بنیاد پر آخری تاریخ کے بعد جرمانے میں راحت دیتی رہی ہے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close