اپنا دیشتازہ ترین خبریں

جموں و کشمیر: ایل او سی پر گولہ باری، فوجی حوالدار جاں بحق دوسرا زخمی

جموں، (یو این آئی)
جموں و کشمیر کے ضلع راجوری کے نوشہرہ سیکٹر میں لائن آف کنٹرول پر جمعہ اور ہفتے کی درمیانی شب ہندوستان اور پاکستان کی فوج کے درمیان گولہ باری کے نتیجے میں ایک فوجی حوالدار جاں بحق اور دوسرا زخمی ہوا۔ مہلوک فوجی کی شناخت حوالدار پاٹل سنگرام شیواجی ساکن کولہاپور مہاراشٹر کے طور پر ہوئی ہے۔

سرکاری ذرائع نے بتایا کہ پاکستانی فوج نے جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے ضلع راجوری میں ایل او سی پر نوشہرہ سیکٹر میں جمعہ اور ہفتے کی درمیانی شب بھارتی چوکیوں کو نشانہ بنا کر گولہ باری کر دی۔ انہوں نے بتایا کہ گولہ باری کے نتیجے میں ایک حوالدار سمیت دو فوجی جوان زخمی ہوگئے جن میں سے بعد ازاں فوجی حوالدار زخموں کی تاب نہ لاکر دم توڑ گیا جبکہ دوسرا فوجی جوان فوجی ہسپتال میں زیر علاج ہے۔

جموں میں تعینات دفاعی ترجمان لیفٹیننٹ کرنل دیویندر آنند نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ 21 نومبر یعنی ہفتے کو پاکستانی فوج نے ضلع راجوری میں ایل او سی کے نوشہرہ سیکٹر میں بلا اشتعال جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی کی۔ انہوں نے کہا: ‘ہمارے فوجیوں نے دشمن کی فائرنگ کا منہ توڑ جواب دیا۔ فائرنگ کے واقعہ میں حوالدار پاٹل سنگرام شیواجی شدید طور پر زخمی ہوئے اور بعد ازاں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئے’۔ دفاعی ترجمان نے مزید کہا کہ سنگرام شیواجی ایک بہادر، انتہائی پرعزم اور ایک مخلص فوجی تھے۔ انہوں نے کہا کہ قوم مہلوک فوجی کی ہمیشہ احسان مند رہے گی۔

قابل ذکر ہے کہ ہندوستان اور پاکستان کے درمیان سال 2003 میں جنگ بندی معاہدہ طے پانے کے باوجود بھی جموں و کشمیر کے سرحدوں پر طرفین کے درمیان ایک دوسرے کے ٹھکانوں کو نشانہ بنانے کا سلسلہ تواتر کے ساتھ جاری ہے۔ جموں و کشمیر کی سرحدوں پر طرفین کے درمیان گذشتہ تین برسوں کے دوران زائد از ساڑھے آٹھ ہزار بار جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی ہوئی ہے۔ وزارت امور داخلہ نے جموں کے ایک کارکن کی طرف سے دائر ایک آر ٹی آئی کے جواب میں انکشاف کیا ہے کہ یکم جنوری 2018 سے سال رواں کے ماہ جولائی تک جموں و کشمیر میں سرحدوں پر پاکستان نے 8 ہزار 5 سو 71 بار جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی کی ہے۔

نیوز ایجنسی (یو این آئی ان پٹ کے ساتھ)

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close