آئینۂ عالمتازہ ترین خبریں

جاپان: ’ہیگی بیز‘ سے تباہی، 43 ہلاک، چار لاکھ افراد کو پینے کا پانی میسر نہیں

جاپان کے دارالحکومت ٹوکیو میں تاریخ کے خطرناک ترین سمندری طوفان ’ہیگی بیز‘ نے تباہی مچا دی، جس میں مختلف حادثات میں مرنے والوں کی تعداد 43 ہوگئی، 189 افراد زخمی اور 17 افراد اب بھی لاپتہ بتائے جا رہے ہیں۔

موسلا دھار بارش کے بعد ٹوکیو سمیت متعدد علاقوں میں سیلابی صورتحال کا سامنا ہے، متاثرہ علاقوں سے لوگوں کو ریسکیو کرنے کا عمل جاری ہے۔
گزشتہ روز ٹوکیو سے ٹکرانے والے طوفان ’ہیگی بیز‘ نے ملک کے مشرقی حصے میں شدید تباہی مچائی ہے۔ موسلا دھار بارشوں کے بعد ٹوکیو اور فوکو شیما سمیت کئی علاقے زیر آب آ گئے، دریاؤں میں پانی کی سطح بلند ہو گئی جبکہ سمندر میں لہریں بلند ہو گئیں۔ متاثرہ علاقوں میں پھنسے ہوئے لوگوں کو نکالنے کے لیے بڑے پیمانے پر ریسکیو آپریشن جاری ہے۔

طوفان کے باعث پونے 4 لاکھ گھروں کی بجلی بھی منقطع ہو چکی ہے۔ 14000 گھروں میں رہنے والوں کو پینے کا پانی میسر نہیں ہے۔ پورے ملک میں راحت مہم کیلئے 27000 کارکنان کو لگایا گیا ہے۔ حکام نے ساحلی علاقوں کے 60 لاکھ سے زائد افراد کو انخلاء کی وارننگ بھی جاری کر رکھی ہے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close