تازہ ترین خبریںدلی نامہ

تمام مذاہب بھائی چارے اور محبت کا پیغام دیتے ہیں

راشٹریہ یوا یوجنا کی جانب سے پرانی دہلی میں قومی یکجہتی خیر سگالی مارچ کا انعقاد

نئی دہلی (انور حسین جعفری)
قومی یکجہتی، آپسی بھائی چارے کے فروغ اور نشہ خوری مخالف معاشرے کے سلگتے ہوئے مسائل کے حل کیلئے سماجی تنظیم راشٹریہ یوا یوجنا کے بینر تلے دہلی کی شاہی فتح پوری مسجد کے قریب چرچ سے خیر سگالی مارچ کا انعقاد کیا گیا۔ جس میں مختلف مذاہب کے سیکڑوں افراد نے شرکت کی۔ مارچ فتح پوری چرچ سے شروع ہوا جو کٹرہ بڑیان، لال کنواں، فراش خانہ ہوتا ہوا حوض قاضی چوک پر جا کر اختتام پذیر ہوا۔ قومی یکجہتی کا یہ خیر سگالی مارچ معروف سماجی کارکن اور گاندھی وادی بزرگ رہنما ایس این سبا راؤ کی قیادت میں نکالا گیا تھا۔

اس موقع پر ملک میں قومی یکجہتی، خیر سگالی، آپسی بھائی چارے کے فروغ، خواتین کے احترام، تشدد، غربت، نشہ خوری سے آزاد سماج اور ملک میں امن و امان قائم کرنے کیلئے حوض قاضی چوک پر ایک جلسے کا اہتمام کیا گیا، جس کی صدارت گرو ونود گپتا نے کی۔ جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے 90 سالہ بزرگ رہنما سبا راؤ نے کہا کہ آج سماج میں لوگ مذہب کے نام پر لڑ رہے ہیں مگر مذہب کی تعلیمات پر عمل نہیں کر رہے۔ آج کے اس پر آشوب اور پر تشدد ماحول میں گاندھی جی کے افکار و نظریات کی تشہیر و تبلیغ ضروری ہے۔ پروفیسر راج کمار جین نے کہاکہ پرانی دہلی گنگا جمنی تہذیب کا گہوارہ ہے پورے ہندوستان میں اگر کہیں گنگا جمنی تہذیب کا نظارہ دیکھنے کو ملتا ہے تو وہی پرانی دہلی ہے جہاں لوگ صدیوں سے ایک دوسرے کے ساتھ پیار محبت اور امن و امان کے ساتھ رہتے آرہے ہیں اور ایک دوسرے کی خوشی اور غم میں شریک رہتے ہیں۔

خیر سگالی مارچ کے کنوینر اجمیری گیٹ وارڈ سے میونسپل کونسلر راکیش کمار نے کہا کہ آج کچھ طاقتیں سماج کو توڑنے، ذات، نسل اور مذہب کے نام پر سماج میں ایک دوسرے کیلئے زہر گھولنے کا کام کر رہی ہیں۔ جس کی وجہ سے مختلف جگہوں سے ماب لنچنگ کی خبریں آرہی ہیں۔ راکیش کمار نے کہاکہ ہمارے ملک میں مختلف مذاہب، نسل، رنگ اور زبان بولنے والے لوگ صدیوں سے ایک دوسرے کے ساتھ محبت اور بھائی چارے کے ساتھ رہتے آرہے ہیں اور یہی ہندوستان کی شناخت ہے۔ اس موقع پر ’آپ‘ رکن پارلیمنٹ(راجیہ سبھا) این ڈی گپتا اور دہلی کے وزیر خوراک عمران حسین نے بھی جلسہ میں شرکت کر کے اپنے خیالات کا اظہار کیا۔

خیر سگالی مارچ کے اہم معاونین میں راجیندر گپتا، سنجے سنگھ، بلدیو گپتا، ستیندر جین، سریش کھنڈیلوال، راجیندر سنگھل، کرشن مراری جاٹو، نریندر بھیکو رام جین، شیو پر ساد پہاڑیہ، چودھری رمیش، چودھری درگا پنڈت، بیجو خلیفہ، منوج نارائن، موہن لال پر دھان، چندر موہن کھٹک، کیدار ناتھ، شوبھا رام، شنکر پہلوان، نعیم ملک، عاقل ننو، شکیل احمد، نشا صدیقی، شمع پروین، محمد اطیب، نعیم بھارتی، شیرو، ویرو، شعیب الدین، موہن لال کنوجیا، تلسی شرما، سنجے کنوجیا، نفیس احمد وغیرہ شامل تھے۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close