اپنا دیشتازہ ترین خبریں

بیلٹ پیپر سے الیکشن کرانا ممکن نہیں، EVMسے ہی ہوں گے انتخابات: الیکشن کمیشن

الیكٹرانك ووٹنگ مشین (ای وی ایم) کو ہیک کئے جانے کے دعوے سے اٹھے تنازعات کے درمیان الیکشن کمیشن نے جمعرات کو واضح کیا کہ ملک میں بیلٹ پیپر سے انتخابات کرانے کا انتظام دوبارہ لاگو نہیں کیا جا سکتا۔

چیف الیکشن کمشنر سنیل اروڑہ نے انتخابات کو سبھی کیلئے اور تمام ووٹروں کو پولنگ کے لئے حوصلہ افزائی کرنے کے لئے منعقد بین الاقوامی کانفرنس کے موقع پر کہا کہ ای وی ایم سے الیکشن کرانا مکمل طور پر محفوظ ہے، اسلئے ملک میں بیلٹ پیپر سے ووٹنگ کا انتظام دوبارہ لاگو نہیں کیا جا سکتا۔

چیف الیکشن کمشنر نے کہا کہ ایک بار پھر میں واضح کرنا چاہتا ہوں کہ یہ صرف میرا ہی نہیں بلکہ پورے الیکشن کمیشن کا فیصلہ ہے کہ ہم بیلٹ پیپر کے دور میں واپس لوٹ نہیں سکتے. انہوں نے کہا کہ اس دور میں واپس نہیں لوٹا جا سکتا ہے جبکہ ووٹ بوتھ بدمعاشوں کے ذریعے لوٹ لیئے جاتے تھے، ووٹوں کی گنتی میں دیر ہوتی تھی اور ووٹر کا استحصال بھی ہوتا تھا. اس لئے موجودہ نظام ہی قائم رہے گا.

قابل غور ہے کہ لندن میں گزشتہ دنوں ہندوستانی نژاد سید شجاع نے ویڈیو كانفرنسنگ کے ذریعہ انکشاف کیا کہ وہ ای وی ایم کو ہیک کر سکتا ہے اور اس نے دعوی کیا کہ 2014 کے لوک سبھا انتخابات میں اس نے ای وی ایم کی ہیکنگ کی تھی۔ شجاع کے اس دعوے سے ملک میں تنازعہ کھڑا ہو گیا اور بہت سی اپوزیشن پارٹیوں نے بیلٹ پیپرسے ووٹ کرائے جانے کی ایک بار پھر زبر دست انداز میں مطالبہ کیا۔

اور دیکھیں

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close